The news is by your side.

Advertisement

چڑیا کو ہلاک کرنے والے جہانگیر خان کی برسی

ڈاکٹر جہانگیر خان ٹیسٹ کرکٹ میں ہندوستان کی نمائندگی کرنے والی پہلی کرکٹ ٹیم کے رکن تھے جنھوں نے کھیل کے میدان میں مختصر عرصہ گزارا۔ تاہم کرکٹ کی تاریخ میں ایک واقعے کی وجہ سے وہ ہمیشہ یاد رکھے جائیں گے۔

یہ 4 جولائی 1936 کی بات ہے جب جہانگیر خان کیمبرج یونیورسٹی کی جانب سے ایم سی سی کے خلاف میدان میں‌ اترے۔ مخالف ٹیم بیٹنگ کررہی تھی۔

جہانگیر خان نے کرکٹ پچ پر موجود بیٹسمین ٹی این پیئرس کو گیند کرانے کے لیے دوڑ لگائی اور جیسے ہی گیند ان کے ہاتھ سے نکلی اسی وقت ایک چڑیا پرواز کرتی ہوئی آکر اس سے ٹکرا گئی۔

پوری قوت سے پھینکی گئی گیند کی ضرب نے چڑیا کو اس کی زندگی سے محروم کر دیا۔

سبھی کھلاڑی اس ننھی چڑیا کی ہلاکت پر دکھی تھے، اور یہ ایک حادثہ تھا۔ اس چڑیا کو حنوط کر کے لارڈز گراؤنڈ کے لانگ روم میں محفوظ کرلیا گیا اور اس کے ساتھ ہی وہ گیند بھی وہیں‌ رکھ دی گئی۔

آج اس ٹیسٹ کرکٹر کی برسی ہے۔ ڈاکٹر جہانگیر خان 23 جولائی 1988 کو لاہور میں وفات پاگئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں