کرپشن کے الزامات بے بنیاد ہیں: خیبرپختونخواہ کے نامزد وزیر اعلیٰ کی وضاحت
The news is by your side.

Advertisement

کرپشن کے الزامات بے بنیاد ہیں: خیبرپختونخواہ کے نامزد وزیر اعلیٰ کی وضاحت

پشاور: خیبرپختونخواہ کے نامزد وزیر اعلیٰ محمود خان نے کرپشن سے متعلق وضاحتی بیان دیتے ہوئے کہا ہے کہ مذکورہ الزامات بے بنیاد ہیں۔

تفصیلات کے مطابق خیبرپختونخواہ کے نامزد وزیر اعلیٰ پر بدعنوانی کے الزامات لگائے گئے تھے، محمود خان کا کہنا ہے کہ اٹھارہ لاکھ کا چیک غلطی سے میرے نام پر کاٹا گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ رقم جن کھلاڑیوں کا حق تھی انہیں مل گئی، مجھ پر کرپشن کے الزامات بے بنیاد ہیں، غلطی سے میرے نام پر چیک کاٹا گیا تھا۔

قبل ازیں 2014 میں محمود خان خیبرپختونخواہ کی صوبائی کابینہ میں کھیل، سیاحت، میوزیم اور ثقافت کے وزیر تھے، 2013 میں انہوں نے اپنی وزارت کا حلف اٹھایا اور 2014 میں ان پر کرپشن کے الزامات لگے تھے۔


میں اللہ کے بعد عمران خان کا شکر گزار ہوں ، محمود خان


ان پر 18 لاکھ روپے اپنے ذاتی اکاؤنٹ میں منتقل کرنے کا الزام تھا جس کے بعد ان سے وزارت واپس لے لی گئی، تاہم اس کے بعد پھر انکوائری میں وہ کلئیر ہو گئے اور انکی وزارت میں کام کرنے والے کچھ بیوروکریٹ اس میں ملوث تھے۔

بعد ازاں انہیں ایک بار پھر وزارت دے دی گئی جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ ان پر الزامات کلئیر ہو گئے تھے، جون 2014 میں ان کو ابلاغیات کا اور بعد میں داخلہ اور قبائلی امور کا وزیر بنادیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ آج محمود خان نے بنی گالہ آمد پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ میں اللہ کے بعد عمران خان کا شکر گزار ہوں ، انھوں نے مجھ پر اعتماد کرکے عہدے کے لئے نامزد کیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں