The news is by your side.

Advertisement

دبئی میں تین سالہ بچی سوئمنگ پول میں ڈوب کر جاں بحق ہوگئی

دبئی : رہائشی عمارت کے سوئمنگ پول میں تین سالہ جرمن لڑکی ڈوب کر جاں بحق ہوگئی، متاثرہ بچی سوئمنگ پول کے نزدیک اپنے دو بھائیوں کے ہمراہ کھیل میں مصروف تھی۔

عرب میڈیا کے مطابق متحدہ عرب امارات کی ریاست دبئی کے مال آف ایمریٹس کے عقب میں واقع برہائشی عمارت کے سوئمنگ میں تین سالہ جرمن شہری ڈوب کر جاں بحق ہوگئی، بچی کو فوری طور پر سعودی جرمن اسپتال منتقل کیا گیا تاہم وہ جانبر نہ ہوسکا۔

پولیس کے مطابق پیر کی دوپہر کال موصول ہوئی، ایمبولینس اور پولیس ٹیم جائے وقوع پر پہنچی اور بچی کو اسپتال منتقل کیا۔

اماراتی میڈیا کا کہنا تھا کہ سافٹ ویئر کمپنی کا ملازم بچی کا والد حادثے کے وقت گھر میں موجود تھا لیکن اپنے کام میں مصروف تھا۔

مقامی میڈیا کا کہنا تھا کہ بچی کے والد نے سوچا کہ بچی آیا کے ساتھ ہے لیکن تین منٹ بعد احساس ہوا کہ بچی نظر نہیں آرہی، متاثرہ بچی کا والد باہر دیکھنے گیا تو بچی کو سوئمنگ پول میں بے حال پڑا دیکھ کر حیران رہ گیا۔

مقامی میڈیا کے مطابق والد نے تین سالہ بچی کو سوئمنگ پول سے باہر نکالا اور ابتدائی طبی امداد فراہم کرنے کے بعد ریسکیو ٹیم کے ہمراہ سعودی جرمن استپال پہچنایا جہاں ڈاکٹرز نے بچی کو مردہ قرار دیا۔

پولیس کی جانب سے والدین نے گزارش کی گئی ہے کہ اپنے بچوں پر ہر نظر رکھیں، کیوں کہ اس سے قبل بھی متعدد بچوں کے سوئمنگ پول میں ڈوب کر ہلاک ہونے واقعات رونما ہوچکے ہیں۔

مزید پڑھیں: اسکول کے سوئمنگ پول میں ڈوب کر 4 سالہ طالب علم جاں بحق

یاد رہے کہ شارجہ کے نجی اسکول کے سوئمنگ پول میں چار سالہ طالب علم 14 نومبر کو ڈوب گیا تھا، اسکول انتظامیہ کو جب واقعے کی اطلاع ملی تو انہوں نے بچے کو ایمبولینس کے ذریعے القاسمی اسپتال منتقل کیا مگر وہ جانبر نہ ہوسکا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: دبئی کے سوئمنگ پول میں 2 بچے ڈوب کر جاں بحق

واضح رہے کہ رواں برس جون میں دو بچے اُس وقت سوئمنگ پول میں ڈوب کر جاں بحق ہوگئے تھے جب والدین افطاری کرنے میں مصروف تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں