The news is by your side.

Advertisement

پاکستان میں کورونا کے تشویشناک مریضوں کی جان بچانے والا انجکشن نایاب

لاہور : کوروناکے تشویشناک مریضوں کو بچانے والا ایکٹیمرا انجکشن نایاب ہوگیا ، سی ای او ڈریپ نے کہا ہے کہ ٹوسیلی زومیب انجکشن کی 10 ہزارکی کھیپ اتوار کی رات آ جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب کے تدریسی اسپتالوں سمیت، فارمیسیز، میڈیکل اسٹور پر کورونا کے تشویشناک مریضوں کوبچانےوالا  ٹوسیلی زومیب ایکٹیمراانجکشن نایاب ہوگیا ، فوکل اسپتال، میو اسپتال، پی کے ایل آئی ،جنرل اسپتال میں بھی انجکشن موجود نہیں جبکہ سرکاری و نجی اسپتالوں میں وینٹی لیٹرز پر موجود مریض بھی انجکشن سے محروم ہیں۔

سی ای او میو اسپتال پروفیسراسد اسلم نے کہا 40سنجیدہ مریض انجکشن لگنے کے بعد صحت یاب ہو چکے ہیں، مریضوں پر 70 سے 80فیصدکامیاب رزلٹ آیا، ایک مریض پر 2مکمل ڈوز لگنے سے1 لاکھ20ہزارروپے کا خرچ ہے، تمام سنجیدہ مریضوں کو مفت انجکشن لگائے گئے ہیں۔

پروفیسر اسد اسلم کا کہنا تھا کہ انجکشن کی عدم دستیابی کےباعث مشکلات کاسامنا ہے، محکمہ صحت نےکمپنی کیساتھ انجکشن نرخ طے کرلئےجلد سپلائی ہوگی۔

مزید پڑھیں : ہائیڈروکسی کلوروکین کے استعمال پر پابندی، پاکستان میں نئی دوا پر ٹرائل شروع

ماہرین نے کہا ٹوسیلوزیماب انجکشن وینٹی لیٹرکےمریضوں پر زیادہ اثر انداز نہیں ہوتا، وینٹی لیٹرپرجانےسے پہلے ڈاکٹر سے مشورہ کرکے انجکشن لگایا جائے۔

دوسری جانب سی ای او ڈریپ عاصم روف کا کہنا تھا کہ ٹوسیلوزیماب انجکشن کی 10 ہزارکی کھیپ اتوار کی رات آ جائے گی جبکہ دوسری کھیپ 10 جون کو مل جائے گی، انجکشن کی کمی ختم کرنے کیلئے دیگر ممالک سےبھی رابطےمیں ہیں۔

خیال رہے  پنجاب حکومت نے کورونا کے مریضوں کیلئے نئی دوائی دینے کی منظوری دی تھی ،ایکٹیمرا‘‘ نامی دوائی کورونا مریضوں کو لگائی جائے گی۔ ذرائع کا کہنا تھا یہ شریان میں لگنے والی دوائی مہنگی ہے تو اس کے لئے سنٹرل پورٹل تیار کیا جائے گا ،جس میں اسپتالوں کی جانب سے مریضوں کی تعداد کے حوالے سے ڈیمانڈ اپ لوڈ کی جائے گی اور مریضوں کا تمام ڈیٹا بھی اپ لوڈ کیا جائے گا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں