The news is by your side.

Advertisement

امریکا کی پہلی سیاہ فام نوبل انعام یافتہ ادیبہ جہانِ فانی سے کوچ کرگئیں

نیویارک: امریکا کی پہلی سیاہ فام نوبل انعام یافتہ ادیبہ ٹونی موریسن جہانِ فانی سے کوچ کر گئیں۔

بین الاقوامی خبررساں ادارے کی رپورٹک ے مطابق امریکا کی معروف ادیبہ ٹونی موریسن مختصر عرصے سے علیل تھیں اور چھ اگست کی صبح وہ 88 برس کی عمر میں دنیا سے رخصت ہوگئیں۔

رپورٹ کے مطابق ٹونی موریسن کو ادب کا نوبل انعام چھبیس برس قبل دیا گیا، وہ اعزاز حاصل کرنے والی پہلی سیاہ فام مصنفہ تھیں۔

اُن کے اہل خانہ نے بتایا کہ موریسن کو گزشتہ دنوں طبیعت ناسازی کے بعد اسپتال منتقل کیا گیاتھا، 6 اگست کی رات اُن کی حالت بگڑی پھر وہ سنبھل نہ سکیں اور ڈاکٹرز نے صبح موت کی تصدیق کی۔

اہل خانہ کا کہنا تھا کہ ’’اُن کا انتقال ہم سب کے لیے بہت بڑا نقصان ہے، البتہ ہم شکرگزار ہیں کہ انہوں نے ایک طویل اور اچھی زندگی بسر کی اور آپ سب نے اُن کی صلاحیتوں کو سراہا‘‘۔

ٹونی موریسن کے پبلشر نے بتایا کہ ادیبہ کا انتقال نیویارک کے شہر مونٹی فیور میڈیکل سینٹر میں ہوا، انہیں 1993 میں ادب کے نوبل انعام کا حق دار ٹھہرایا گیا تھا۔

’’موریسن کو نوبل انعام دینے کی تجویز سویڈیش اکیڈمی کی طرف سے اُن کی تحاریر اور کتابوں کی وجہ سے کی گئی، انہیں معروف ناول ’محبوب‘ کی وجہ سے 1988 میں فکشن کا پولٹرزپرائز بھی دیا گیا‘‘۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں