سال 2017 کی ممکنہ مقبول کتابیں: پاکستانی مصنف بھی فہرست میں شامل -
The news is by your side.

Advertisement

سال 2017 کی ممکنہ مقبول کتابیں: پاکستانی مصنف بھی فہرست میں شامل

پاکستانی فن و ادب صرف ملکی سرحدوں تک محدود نہیں رہا۔ اب دنیا بھر میں پاکستان فن و ثقافت اور ادب کی اپنی حیثیت ہے۔ اس میں جہاں گلوبلائزیشن کا کردار ہے، وہیں پاکستانی ادب اور فن کا معیاری ہونا بھی دنیا بھر میں اس کو مقبول بنانے کا سبب بنا۔

چند روز قبل امریکی اخبار ہفنگٹن پوسٹ نے ایسی کتابوں کی فہرست جاری کی ہے جنہیں متوقع طور پر سال 2017 میں سب سے زیادہ پڑھا جائے گا، اور آپ کو جان کر خوشگوار حیرت ہوگی کہ اس فہرست میں 3 پاکستانی مصنفوں کی کتابیں بھی شامل ہیں۔

آئیے دیکھتے ہیں وہ کون سے مصنفین ہیں۔

:صنم مہر

sanam-maher

کراچی کی رہائشی صنم مہر ایک معروف ادیبہ اور صحافی ہیں اور وہ مختلف بین الاقوامی اخبارات و ویب سائٹس کے لیے لکھتی ہیں۔ ان کے لکھے ہوئے مضامین نہایت پر اثر ہوتے ہیں۔

صنم مہر کی بہت جلد ایک کتاب منظر عام پر آنے والی ہے جو خود ساختہ غیرت کے نام پر قتل کی جانے والی ماڈل قندیل بلوچ پر لکھی گئی ہے۔

ہفنگٹن پوسٹ کے مطابق یہ کتاب ایک بہادر نوجوان لڑکی کی کہانی کو ایک نئے انداز سے پیش کرے گی۔

:محسن حمید

mohsin-hameed

محسن حمید پاکستانی نژاد برطانوی مصنف ہیں جو اس سے قبل ’دا ریلکٹنٹ فنڈامینٹلسٹ‘ نامی ناول لکھ چکے ہیں۔ ان کا ایک اور ناول رواں سال منظر عام پر آنے والا ہے۔ ’ایگزٹ ویسٹ‘ نامی اس ناول میں جلاوطنی کو موضوع بنایا گیا ہے۔

:سبین جویری

sabyn-javeri

سبین جویری کا ناول ’نو باڈی کلڈ ہر‘ ایک تخیلاتی ناول ہے تاہم یہ بینظیر بھٹو کے قتل کے واقعات سے متاثر ہوکر لکھا گیا ہے۔ ناول میں سیاست اور عدالتی نظام کو موضوع بحث بنایا گیا ہے۔

مصنفہ سبین کا کہنا ہے کہ صرف ایک بینظیر بھٹو ہی نہیں بلکہ برصغیر میں کئی خواتین سیاستدانوں کو قتل کیا گیا اور ان کا یہ ناول ان سب سے متاثر ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں