The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب کی سڑکوں پر گاڑی چلانے والے ہوشیار ہوجائیں

ریاض: سعودی عرب کی سڑکوں پر گاڑی چلانے والوں کے لیے محکمہ ٹریفک نے نئی سخت ہدایات جاری کردیں، خلاف ورزی پر بھاری جرمانے عائد کیے گئے ہیں۔

سعودی ویب سائٹ کے مطابق سعودی محکمہ ٹریفک نے کہا ہے کہ گاڑیوں کے شیشے مشروط شکل میں رنگین کیے جاسکتے ہیں۔ شرائط کی پابندی نہ کرنے پر شیشے رنگین کرنا خلاف ورزی ہے۔

محکمہ ٹریفک کے مطابق پہلی شرط یہ ہے کہ شیشہ رنگین کرنے کی صورت میں شفاف رہے، شیشہ ایسا ہو جس سے تصویر منعکس نہ ہوتی ہو۔

شیشہ کسی انسان یا ماحول کے لیے ضرر رساں نہ ہو، گاڑی کے سامنے والے یا عقبی شیشے کو کسی طور رنگین کرنے کی اجازت نہیں۔

محکمہ ٹریفک کے مطابق جن گاڑیوں کے شیشے رنگین کرنے کی مشروط اجازت دی جاتی ہے وہ ایسی گاڑیاں ہوتی ہیں جن میں ڈرائیونگ کیبن ہوتا ہے اور ان کی عقبی نشستیں سواریوں کی منتقلی کے لیے مختص ہوتی ہیں۔

لیموزین، عام ٹیکسی، یومیہ سواریاں لانے لے جانے والی گاڑیاں، ایک دروازے والی سپورٹس کار، سامان بردار گاڑیوں اور شہروں کے اندر ٹرانسپورٹ سروس فراہم کرنے والی بسوں کو شیشے رنگین کرنے کی اجازت نہیں ہے۔

محکمہ ٹریفک نے شہریوں اور مقیم غیر ملکیوں کو خبردار کیا ہے کہ 6 خلاف ورزیوں سے انتہائی محتاط رہیں۔ ان میں سے بعض کے جرمانے 10 ہزار ریال تک ہیں۔

محکمہ ٹریفک کے مطابق ریڈ سگنل توڑنے پر کم از کم جرمانہ 3 ہزار اور زیادہ سے زیادہ 6 ہزار ریال ہے۔ یہ ایسی خلاف ورزی ہے جس سے لوگوں کی جان بھی ضائع ہوسکتی ہے لہٰذا اسے بھاری ٹریفک خلاف ورزیوں کی فہرست میں شامل کیا گیا ہے۔

کسی اور کی گاڑی کی نمبر پلیٹ استعمال کرنے پر کم از کم جرمانہ 5 ہزار ریال اور زیادہ سے زیادہ 10 ہزار ریال تک ہے۔ ایسی گاڑی محکمہ ٹریفک کی تحویل میں رہے گی۔

ٹریفک قوانین کی 11 خلاف ورزیاں عوامی سلامتی کے لیے خطرناک ہیں۔ ان میں ٹائر اسکریچنگ، نشے یا خواب آور دوا لے کر گاڑی چلانا، ریڈ سگنل توڑنا اور مخالف سمت میں گاڑی چلانا شامل ہیں۔

علاوہ ازیں زگ زیگ ڈرائیونگ، مٹی ہوئی نمبر پلیٹ کے ساتھ ڈرائیونگ، موڑ اور ڈھلوان پر اوور ٹیک کرنا، بغیر بریک والی گاڑی چلانا، بغیر لائٹس والی گاڑی چلانا، فی گھنٹہ مقررہ رفتار یعنی 25 کلو میٹر سے زیادہ رفتار کے ساتھ گاڑی چلانا، ڈرائیونگ کے دوران موبائل کا استعمال، اسٹاپ والے سگنل پر گاڑی وقفے کے بغیر چلاتے چلے جانا بھی ٹریفک قوانین کی سنگین خلاف ورزیاں ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں