The news is by your side.

Advertisement

وکی لیکس کے انکشافات، امریکی صدر ٹرمپ کا اظہارِ تشویش

واشنگٹن : امریکی صدر ڈولڈ ٹرمپ نے وکی لیکس کی جانب سے امریکی سی آئی اے پر لگائے گئے الزام پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے۔

وائٹ ہاؤس کے ترجمان شان اسپائسر نے نیوز بریفنگ میں کہا ہے کہ وکی لیکس کی جانب سے جاری کی گئی معلومات امریکہ کی سلامتی کیلئے خطرہ بن سکتی ہیں۔ ٹرمپ انتظامیہ ایسی معلومات افشا کرنے والوں کے ساتھ انتہائی سختی سے نمٹے گی ۔

انہوں نےکہا کہ جس نے بھی ان معلومات کو راز میں نہیں رکھا، انکے خلاف قانون کے مطابق سخت کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔


مزید پڑھیں : وکی لیکس کا سی آئی اے کے خفیہ ہیکنگ ہتھیاروں کا انکشاف


یاد رہے کہ گذشتہ روز وکی لیکس نے سی آئی اے کے خفیہ ہیکنگ ہتھیاروں سے متعلق انکشاف کیا تھا ، سی آئی اے کے پاس کمپیوٹر، فون ہیکنگ کے خفیہ ہتھیار موجود ہیں۔

وکی لیکس کی جانب سے خفیہ دستاویزات کو منظر عام پر لانے کا سلسلہ جاری ہے، وکی لیکس نے امریکی خفیہ ادارے سی آئی اے کی آٹھ ہزار سات سو سے زائد خفیہ دستاویزات شائع کی ہیں۔ لیکن اس مرتبہ وکی لیکس نے ایسے برقی آلات کی ایک فہرست بھی جاری کر دی ہے، جن کے ذریعے امریکی خفیہ ادارہ مبینہ طور پر لوگوں کی جاسوسی کر رہا ہے۔

سی آئی اے ہیکنگ کیلئے وائرس یا سافٹ ویئرز کا استعمال کرتی ہے،ہیکنگ ہتھیاروں میں ونڈوز، اینڈرائڈ کو متاثر کرنیوالا وائرس جبکہ ایپل کے آئی او سی آپریٹنگ سٹسم کو متاثر کرنیوالا سافٹ ویئر بھی شامل ہیں، جس کے زریعے ہیکنگ سے کمپیوٹر، موبائل صارف کے ڈیٹا تک رسائی حاصل کی جاتی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں