The news is by your side.

Advertisement

ایتھوپیا میں طیارہ حادثہ، امریکی ٹیم تحقیقات کرے گی

نیروبی: امریکی ملک ایتھوپیا میں طیارہ حادثے کی خصوصی تحقیقات کے لیے امریکا نے ٹیم تشکیل دینے کا فیصلہ کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق ایتھوپین ایئر لائن کا طیارہ بوئنگ 737 کینیا جاتے ہوئے گر کر تباہ ہوگیا، متاثرہ طیارے میں 157 افراد سوار تھے جن میں سے 150 کی ہلاکت کی تصدیق ہوگئی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ امریکا نے چار رکنی تحقیقاتی ٹیم تشکیل دینے کا فیصلہ کیا ہے جو مقامی اداروں کے ساتھ مل کر ایتھوپیا طیارے کے حادثے کی تحقیقات کرے گی۔

ایتھوپیا کے دارالحکومت اددیس آبابا کے ہوائی اڈے سے اڑان بھرنے والا ایتھوپین ایئر لائن کا مسافر بردار طیارہ نامعلوم وجوہات کے باعث ہوائی اڈے سے اڑان بھرنے کے کچھ دیر بعد اچانک ایتھوپین ٹاؤن بِس ہوفتو میں گر کر تباہ ہوگیا۔

امریکی تحقیقاتی ٹیم جلد افریقی ملک ایتھوپیا جائے گی، اور حادثے کا باریک بینی سے مشاہدہ کرے گی۔

ایتھوپین ایئرلائن کا مسافر بردار طیارہ حادثے کا شکار، 157 مسافر ہلاک

دوسری جانب اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے بھی حادثے میں ہلاک ہونے والوں کے لواحقین سے گہرے دکھ کا اظہار کیا۔

ان کے مطابق طیارے میں اقوام متحدہ کے کارکن بھی تھے جو سفر کے دوران حادثے کا شکار ہوگئے۔

علاوہ ازیں ایتھوپیا کے وزیر اعظم ابھی احمد نے سماجی احمد نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کیا کہ ’حادثے کا شکار ہونے افراد کے اہلخانہ کے دکھ میں برابر کے شریک ہیں جنہوں نے اپنے پیاروں کو کھویا ہے‘۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں