The news is by your side.

Advertisement

متحدہ عرب امارات، قرض لینے کے خواہشمند افراد کے لیے خوشخبری

دبئی: متحدہ عرب امارات کے بینک نے قرض لینے کے خواہشمند افراد کے لیے اعلان کیا ہے کہ اب قرض کی حدود کو بڑھا کر 2 لاکھ درہم کردیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ عرب امارات کے بینک ایمریٹس اسلامی نے قرض دہندگان کے لیے اعلان کیا ہے کہ اب 2 لاکھ درہم قرض لیا جاسکے گا، بینک انتظامیہ کا کہنا ہے کہ 8 مئی 2018 تک قرض کے لیے درخواستیں جمع کروائی جاسکتی ہیں تاہم جس کی تنخواہ ماہوار 7500 درہم ہوگی وہ قرض کے لیے درخواست دے سکتا ہے۔

ڈپٹی سی ای او کنزیومر بینکنگ ایمریٹس اسلامی وسیم سیفی کا کہنا ہے کہ رمضان اور گرمیوں کے مہینے میں قرضوں کی ڈیمانڈ میں اضافے کے پیش نظر یہ قدم اٹھایا گیا ہے۔

بینک انتظامیہ کے مطابق ماہانہ دس ہزار درہم سے کم کمانے والے افراد بھی مذکورہ شرائط پر پورا اترتے ہوئے فائدہ اٹھا سکتے ہیں، وسیم سیفی کا کہنا ہے کہ رمضان کے مقدس مہینے اور گرمیوں کی چھٹیوں کے اوقات میں کسٹمرز کی ضروریات بڑھ جاتی ہیں ان کے مالیاتی حل کے لیے قرضے کی رقم میں اضافہ کیا گیا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں