The news is by your side.

Advertisement

دمشق میں 7 سال بعد یو اے ای کا سفارت خانہ آج سے دوبارہ کھولا جائے گا

دمشق: شام کے دارالحکومت دمشق میں 7 سال بعد متحدہ عرب امارات اپنا سفارت خانہ آج سے دوبارہ کھولنے جارہا ہے۔

عرب میڈیا کے مطابق شام کے دارالحکومت دمشق میں متحدہ عرب امارات آج سے دوبارہ اپنا سفارت خانہ کھول رہا ہے، یو اے ای کا سفارت خانہ 2011 کے اوائل میں شامی صدر بشار الاسد کے خلاف عوامی احتجاجی تحریک کے آغاز کے بعد بند کردیا گیا تھا۔

شام کی وزارت اطلاعات نے متحدہ عرب امارات کے سفارت خانے کو دوبارہ کھولے جانے کی تصدیق کردی ہے، اماراتی سفارت خانہ ایک بار پھر سے کھولنے کی تمام تر تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق شامی صدر بشار الاسد نے حالیہ برسوں کے دوران میں روس اور ایران کی عسکری مدد سے اپنے خلاف مسلح بغاوت برپا کرنے والے بیشتر گروپوں پر قابو پالیا ہے۔

مزید پڑھیں: شام سے امریکی افواج کی واپسی کا عمل شروع ہوگیا: وائٹ ہاؤس کا اعلان

شامی صدر بشار الاسد کے ملک میں خانہ جنگی سے سرخرو ہوکر نکلنے کے بعد اب عرب ممالک نے آہستہ آہستہ ان سے دوبارہ سلسلہ جوڑنا شروع کیا ہے اور رواں ماہ کے اوائل میں سوڈان کے صدر عمر حسن البشیر نے دمشق کا دورہ کیا تھا، وہ شام میں آٹھ سال قبل خانہ جنگی کے آغاز کے بعد شام کا دورہ کرنے والے پہلے عرب سربراہ ریاست ہیں۔

واضح رہے کہ بائیس عرب ممالک پر مشتمل عرب لیگ نے 2011 میں شام کی رکنیت معطل کردی تھی۔

عرب لیگ کے سیکریٹری جنرل نے رواں سال اپریل میں کہا تھا کہ شام کی رکنیت معطل کرنے کا فیصلہ عجلت میں کیا گیا تھا جبکہ مصر کے سرکاری میڈیا نے بھی حال ہی میں شام کی رکنیت کی بحالی کے حق میں تحریریں شائع کی تھیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں