برطانیہ کی سعودیہ عرب سے ’مظاہرہ کرنے والے شیعہ شہری‘ کی سزا روکنے کی اپیل -
The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ کی سعودیہ عرب سے ’مظاہرہ کرنے والے شیعہ شہری‘ کی سزا روکنے کی اپیل

مانچسٹر: برطانوی وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون نے مشرق ِوسطیٰ کے سب سے اہم اتحادی سعودی عرب سے اپیل کی ہے کہ حکومت مخالف مظاہروں کے اہم شیعہ رکن کو سنائی گئی سزا پرعملدرآمد نہ کیا جائے۔

تفصیلات کے مطابق علی النمرنامی شخص کو سعودیہ کے مشرقی صوبے میں حکومت مخالف مظاہروں میں شریک ہونے پرموت کی سزا سنائی گئی تھی اورڈیوڈ کیمرون نے سزا پرعملدرآمد روکنے کا کہا ہے۔

ان کا کہنا تھا قومی سلامتی کے معاملات میں سعودی عرب اور برطانیہ ایک دوسرے کے انتہائی قریبی اتحادی ہیں لیکن علی النمر اور اس جیسے دوسرے معاملات جن میں انسانی حقوق متاثرہوتے ہیں برطانیہ کو تشویش ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم سعودیہ کو بتانے میں کبھی بھی ہچکچاہٹ محسوس نہیں کرتے کہ انسانی حقوق سے متعلق معاملات پرتشویش ہے۔

واضح رہے کہ علی النمر سعودیہ عرب کے مشرقی صوبے قطیف میں فسادات، احتجاج اورلوٹ مار کے جرم میں سزائے موت سنائی گئی تھی۔

سماجی کارکنان کے مطابق سال 2012 میں گرفتاری کے وقت نمر کی عمر محض 17 سال تھی اوراس پر احتجاج کے ساتھ حکومت مخالف نعرے لگانے کا الزام بھی تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں