The news is by your side.

Advertisement

لیبیا میں امن وامان کے لئے اقوام متحدہ کا اہم اعلان

تریپولی: لیبیا میں کئی دہائیوں سے جاری افراتفری، تشدد اور اختلافات کو ختم کرنے کے لئے اقوام متحدہ نے تاریخی فیصلہ کردیا ہے۔

اسکائی نیوز کے مطابق لیبیا کے لیے اقوام متحدہ کی قائم مقام ایلچی اسیٹیفانی ولیمز نے نئی عبوری حکومت کی تشکیل کا اعلان کیا ، اعلان میں کہا گیا کہ محمد یونس المنفی تین رکنی صدارتی کونسل کی سربراہی کریں گے جبکہ عبدالحمید دبیبہ لیبیا کے نئے وزیراعظم ہوں گے۔

رپورٹ کے مطابق لیبیا میں نئی حکومت کے امیدواروں کے لئے چار گروپ میدان میں تھے، عبوری حکومت کے تمام امیدوار پہلے مرحلے میں مطلوبہ ووٹ حاصل کرنے میں ناکام رہے تھے، دوسرے مرحلے کی ووٹنگ جمعے کو جنیوا میں ہوئی ہے، تاہم تیسرے گروپ کو دوسرے مرحلے کی ووٹنگ میں زیادہ ووٹ ملے، جہاں 74 میں سے 39 ووٹ ان کے حصے میں آئے اور اسی نیتجے سے صدر اور وزیراعظم کا انتخاب عمل میں آیا۔

اسکائی نیوز کے مطابق لیبیا کے لیے اقوام متحدہ کی قائم مقام ایلچی نے ووٹنگ کے نتائج پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ عالمی برادری انتخابی نتائج کی حمایت کرے گی اور منتخب افراد پر نظر رکھے گی ، نئی حکومت پارلیمنٹ سے 21 روز کے اندر اعتماد کا ووٹ حاصل کرنے میں ناکام رہی تو ایسی صورت میں فورم کے ارکان آئندہ کا فیصلہ کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں:  سلامتی کونسل کا لیبیا میں فوری جنگ بندی کا مطالبہ

اسٹیفانی ولیمز نے کہا کہ نئی حکومت کے لیے لازمی ہوگا کہ وہ جنگ بندی معاہدے کی پابندی کرے، نئی حکومت میں عوام کے نمائندہ باصلاحیت افراد کو شامل کرنا ہوگا، اسے سماجی انصاف کے لیے کام کرنا ہوگا، روڈ میپ کی پابندی کرنا ہوگی اور مقررہ وقت پر انتخابات کرانا ہوں گے۔

لیبیا کے اقتصادی حالات سے متعلق سوال پر لیبیا کے لیے اقوام متحدہ کی قائم مقام ایلچی کہا کہ نئی حکومت کو مشکل اقتصادی حالات سے نمٹنا ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں