تازہ ترین

فیض آباد دھرنا : انکوائری کمیشن نے فیض حمید کو کلین چٹ دے دی

پشاور : فیض آباد دھرنا انکوائری کمیشن کی رپورٹ...

حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کردیا

حکومت کی جانب سے پیٹرولیم مصنوعات کی نئی قیمتوں...

سعودی وزیر خارجہ کی قیادت میں اعلیٰ سطح کا وفد پاکستان پہنچ گیا

اسلام آباد: سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان...

حکومت کل سے پٹرول مزید کتنا مہنگا کرنے جارہی ہے؟ عوام کے لئے بڑی خبر

راولپنڈی : پیٹرول کی قیمت میں اضافے کا امکان...

نئے قرض کیلئے مذاکرات، آئی ایم ایف نے پاکستان کے لیے خطرے کی گھنٹی بجادی

واشنگٹن : آئی ایم ایف کی منیجنگ ڈائریکٹر کرسٹیلینا...

شہر قائد میں انوکھی مویشی منڈی سج گئی

عید قرباں کی آمد آمد ہے اور اس سال کراچی میں ایسی انوکھی مویشی منڈی لگائی گئی ہے جہاں قربانی کے جانوروں کی خریدار اور بیوپاری خواتین ہی ہیں۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق عید قرباں کی آمد آمد ہے۔ بڑی عید پر مسلمان سنت ابراہیمی کی پیروی کرتے ہوئے اللہ تعالیٰ کی راہ میں جانوروں کی قربانی کرتے ہیں۔ اپنے من پسند اور بجٹ کے مطابق جانور خریدنے کے لیے لوگ مویشی منڈیوں کا رخ کرتے ہیں۔

کچھ عرصے سے بالخصوص کراچی میں یہ رجحان بڑھا ہے کہ فیملیز قربانی کے جانور خریدنے مویشی منڈی جاتی ہیں لیکن بیوپاری مرد حضرات ہی ہوتے ہیں تاہم اس سال روایت کو تبدیل کرتے ہوئے شہر قائد میں خواتین کے لی ایسی انوکھی مویشی منڈی قائم کی گئی ہے جہاں بیوپاری خواتین ہوں گی اور فیملیز کے علاوہ صرف خواتین بھی وہاں با آسانی جاکر جانوروں کی خریداری کر سکتی ہیں۔

اپنی نوعیت کی یہ انوکھی مویشی منڈی کراچی کے علاقے شادمان میں لگائی گئی ہے۔ منڈی کی انتظامیہ بھی خواتین پر مشتمل ہے جن کا کہنا ہے کہ یہ منڈی فیملیز بالخصوص خواتین خریداروں کی سہولت کے لیے لگائی گئی ہے تاکہ وہ بغیر کسی تردد کے یہاں خریداری کے لیے آسکیں۔

اس حوالے سے آرگنائزر رقیہ فرید کہتی ہیں کہ یہ منڈی بالخصوص ان خواتین کے لیے ہے جن کے گھروں میں کوئی مرد نہیں یا ان کے مرد بیرون ملک کاموں کے سلسلے میں مقیم ہیں اور وہ عام منڈی جانے میں کتراتی ہے اب وہ یہاں فیملی کے ساتھ آکر سکون کے ساتھ اپنی پسند اور بجٹ کے مطابق جانور خرید سکتی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اس منڈی کے لیے انہیں حکومت اور مقامی انتظامیہ کا تعاون حاصل ہے۔ پہلی بار خواتین کی مویشی منڈی لگائی گئی ہے جب کہ مستقبل میں اس کا دائرہ ملک کے دیگر شہروں تک وسیع کرنے کا ارادہ ہے۔

Comments

- Advertisement -
ریحان خان
ریحان خان
ریحان خان کو کوچہٌ صحافت میں 25 سال ہوچکے ہیں اور ا ن دنوں اے آر وائی نیوز سے وابستہ ہیں۔ملکی سیاست، معاشرتی مسائل اور اسپورٹس پر اظہار خیال کرتے ہیں۔ قارئین اپنی رائے اور تجاویز کے لیے ای میل [email protected] پر بھی رابطہ کر سکتے ہیں۔