The news is by your side.

Advertisement

شام سے امریکی افواج کی واپسی کا عمل شروع ہوگیا: وائٹ ہاؤس کا اعلان

واشنگٹن: امریکی وائٹ ہاؤس نے اعلان کیا ہے کہ شام سے امریکی فوج کی واپسی کا عمل شروع ہوچکا ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی وائٹ ہاؤس کا کہنا ہے کہ شام سے فوجیوں کی واپسی کا عمل شروع ہوچکا ہے، یہ عمل سو روز میں پورا کرلیا جائے گا۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ داعش کو تاریخی شکست کے بعد شام سے فوج کی واپسی کا وقت آگیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ شام میں داعش کو شکست دے کر مقصد حاصل کرلیا، دہشت گردی کے خلاف ہمیشہ کھڑے رہے، ہم نے داعش کو بری طرح شکست دی۔

دوسری جانب برطانوی وزارت خارجہ کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ شام میں داعش کو شکست اتحادیوں نے مل کردی ہے۔

بیان میں کہا گیا تھا کہ اب بھی بہت کچھ کرنا باقی ہے، داعش کا خطرہ اب بھی موجود ہے اسے رد نہیں کیاجاسکتا، حالات کنٹرول میں ہے۔

طویل عرصے سے امریکی افواج شام میں موجود ہیں، امریکی حکام کے مطابق افواج نے وہاں اپنے اہداف حاصل کرلیے ہیں اس لیے افواج کو واپس بلانے کا فیصلہ کیا جارہا ہے۔

امریکا نے شام سے اپنی افواج واپس بلانے پر غور شروع کردیا

واضح رہے کہ گذشتہ روز پینٹاگون کے ترجمان نے کہا تھا کہ اس طرح کی خبروں میں کوئی صداقت نہیں ہے اپنے اتحادیوں کے ساتھ شام میں کام کرتے رہیں گے۔

ری پبلکن سینیٹر لِنڈسے گراہم نے شام سے امریکی افواج کو واپس بلانے کی مذمت کرتے ہوئے کہا تھا کہ اس طرح کے اقدامات سے امریکا اور دنیا کے دوسرے ممالک میں خطرناک نتائج برآمد ہوں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں