The news is by your side.

Advertisement

امریکی صدارتی انتخابات میں مسلمان ووٹرز کی اہمیت

واشنگٹن : امریکی صدر باراک اوباما کی مدت ختم ہورہی ہے اور امریکہ کے نئے صدر کا انتخاب ہونا ہے، امریکی صدارتی انتخابات میں پندرہ لاکھ سے زائد مسلمان اپنے ووٹ کا حق استعمال کر رہے ہیں، مسلمانوں کے ووٹ کسی بھی امیدوار کی کامیابی کیلئے انتہائی اہمیت کے حامل ہیں۔

تازہ ترین سروے کے مطابق امریکا بھر میں تیس لاکھ سے زائد مسلمان بستے ہیں، جن میں سے پندرہ لاکھ ووٹنگ کیلئے رجسٹرڈ ہیں، جو کسی بھی امیدوار کی کامیابی میں اہم کردار ادا کریں گے۔

us1

اس وقت مسلمانوں کی مختلف تنظیمیں اور مساجد میں مسلمانوں کو ہیلری کلنٹن کو ووٹ دینے کی تلقین کی جارہی ہے تاہم کچھ مسلمان جو پہلے ہی ٹرمپ کو پسند نہیں کرتے ہیلری کو ووٹ دینے کیلئے بھی تیار نہیں۔

ٹرمپ کے مسلمانوں کے خلاف بیانات پر امریکا میں مسلم کمیونٹی شدید نالاں نظر آتی ہے اور اسی ناراضگی کے اظہار کیلئے مسلمانوں کو ہیلری کلنٹن کو ووٹ کاسٹ کرنے کی درخواست کی جارہی ہے۔


مزید پڑھیں : امریکی صدارتی انتخابات، مسلمان ووٹرزیادہ متحرک ہوگئے


واشنگٹن میں قائم تنظیم ’کونسل آن امریکن اسلامک رلیشنز (کیئر)‘ نے رائے عامہ کی ایک جائزہ رپورٹ مرتب کی ہے، جس میں بتایا گیا ہے کہ مسلمان امریکی ووٹروں میں سے 86 فی صد کے نام درج ہوچکے ہیں، جو اس سال ووٹ دینے کا سوچ رہے ہیں۔

us3

امریکا میں اٹھارہ برس سے کم عمر مسلمانوں کے اندراج میں پہلی باراضافہ ہوا ہے، 18 برس سے کم عمرہزاروں امریکی مسلمان پہلی بار ووٹ ڈالیں گے۔

واضح رہے کہ امریکی صدارتی امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے صدر بننے کے بعد مسلمانوں کے امریکہ میں داخلے پر پابندی کے بیان کے بعد ریپبلکنز کے حامی مسلمان بھی اس بار ڈیموکریٹس کو ووٹ دینے کا ارادہ کر رہے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں