The news is by your side.

Advertisement

کرونا ویکسین لگوانے والی نرس کو ایک ہفتے میں ہی وائرس کا شکار

امریکی ریاست کیلی فورنیا میں کرونا ویکسین لگوانے والی نرس کو ایک ہفتے کے دوران ہی کوویڈ  19 کی تشخیص ہوئی ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق کیلی فورنیا سے تعلق رکھنے والی نرس نے امریکی اور جاپانی کمپنی (فائزر، بائیو این ٹیک) کی مشترکہ کوشش سے تیار کی جانے والی ویکسین ایک ہفتے قبل لگوائی تھی۔

ویکسین لگوانے کے بعد نرس بہت زیادہ مطمئن تھی اور دیگر لوگوں کی طرح اُس کا بھی خیال تھا کہ اب وہ کرونا سے متاثر نہیں ہوگی مگر ایک ہفتے کے اندر ہی اُس کا کرونا ٹیسٹ پازیٹیو آگیا۔

امریکی میڈیا رپورٹ کے مطابق 45 سالہ میتھیو ڈبلیو نامی نرس اُن لوگوں میں شامل تھیں جنہوں نے حکومتی منظوری کے بعد 18 دسمبر کو فائزر کی ویکسین لگوائی تھی۔

نرس کا کہنا ہے کہ وہ 6 روز قبل کرونا یونٹ میں کام کررہی تھیں جس کے دوران انہیں بخار اور دیگر اُن بیماریوں کی شکایت ہوئی جو کرونا کی علامات سمجھی جاتی ہیں۔

بعد ازاں نرس کو جسم اور پٹھوں میں شدید درد کی شکایت ہوئی جس کے بعد ڈاکٹرز نے اُن کا کرونا ٹیسٹ کروایا، جس کی رپورٹ‌ پازیٹیو آئی۔ طبی ماہرین نے اس معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے کہا کہ ’انسانی جسم کو حفاظت کے لیے ایک سے زائد بار فائزر ویکسین کی ضرورت پڑسکتی ہے‘۔

Comments

یہ بھی پڑھیں