عراق میں امریکی تنصیبات پر حملہ ہوا تو ایران خمیازہ بھگتے گا، امریکا US threatens
The news is by your side.

Advertisement

عراق میں امریکی تنصیبات پر حملہ ہوا تو ایران خمیازہ بھگتے گا، امریکا

واشنگٹن : امریکی حکومت نے ایران کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراق میں امریکی تنصیبات کو نقصان پہنچا تو ایران امریکا کے فوری رد عمل کے لیے تیار رہے، امریکا عراق میں موجود امریکی شہریوں کا ہر ممکن دفاع کرے گا۔

تفصیلات کے مطابق امریکا نے ایک مرتبہ پھر ایران کو دھمکیاں دیتے ہوئے کہا ہے کہ اگر عراق میں ایرانی فورسز نے امریکا کے خلاف کوئی بھی فوجی کارروائی کی تو تہران کو سخت کارروائی کا سامنا کرنا پڑے گا۔

وایٹ ہاوس کی جانب سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ عراق میں موجود امریکی تنصیبات پر ایرانی حملے کی صورت میں شدید رد عمل دیا جائے گا۔

امریکی حکومت کی جانب سے الزام عائد کیا گیا ہے کہ ایران نے بصرہ اور دارالحکومت بغداد میں اپنے حامیوں کو امریکی قونصل خانے حملہ کرنے نہیں روکا تھا۔

امریکی حکومت کا کہنا ہے کہ عراق میں امریکی تنصیبات پر حملہ کرنے والے ایرانی تربیت یافتہ شدت پسندوں نے ایران کا فراہم کردہ اسلحہ استعمال کیا ہے۔

واشنگٹن نے خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکا عراق میں موجود اپنے شہریوں کے دفاع ہر صورت میں یقنی بنائے گا۔

یاد رہے کہ ایک ہفتہ قبل عراقی شہری بصرہ میں واقع امریکی قونصل خانے پر تین راکٹ حملے کیے گئے تھے جس کے نتیجے میں عمارت کو شدید نقصان پہنچا تھا تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا تھا۔

ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے سماجی رابطے کی ویب سایٹ ٹویٹر پر  رد عمل دیتےہوئے کہا ہے کہ امریکا کا پاگل پن بہت بڑھ چکا ہے، ایران پر پابندی عائد کرنے کے بعد عالمی عدالت پر پابندی لگانے کی دھمکیاں دے رہا ہے عالمی برادری کو چاہیے کہ امریکا کو راہ راست پر لائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں