The news is by your side.

Advertisement

عذیربلوچ کو پیپلزپارٹی رہنماؤں سے جان کا خطرہ ہے، والدہ

کراچی : لیاری گینگ وار کے مرکزی ملزم عزیر بلوچ کی بیوی نے دعویٰ کیا ہے کہ پیپلز پارٹی کی رہنما فریال تالپور، شرمیلا فاروقی اورپی پی کے دیگر رہنماان کے گھر آئے تھے.

عزیر بلوچ کی والدہ کا کہنا ہے کہ پیپلزپارٹی کے رہنماؤں سے میرے بیٹےکی جان کو خطرہ ہے، عزیربلوچ کوبھائی کہنے والوں نے منہ موڑ لیاتھا۔ انہوں نے کہا کہ ڈی جی رینجرزایماندار ہیں ہمیں ان پرپورا بھروسہ ہے۔

یہ بات عزیر بلوچ کی بیوی اوروالدہ نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام’ ٖآف دی ریکارڈ ‘ اور ’الیونتھ آور‘ میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہی۔

عزیربلوچ کی والدہ کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی کے اہم رہنماﺅں کا ہمارے گھر آنا جانا تھا ،یہ سب اپنے کالے کرتوتوں پر پردہ ڈالنے کے لئے میرے بیٹے کو پہچاننے سے انکارکر رہے ہیں۔

عذیربلوچ کی بیٹی نے کہا کہ فریال تالپور، شرمیلافاروقی، ثانیہ ناز، شہلا رضا، قادر پٹیل، شرجیل میمن ہمارے گھر آچکے ہیں،عزیربلوچ نے فریال تالپور کو اپنی بہن بنایا تھا۔ فریال تالپوراورشرمیلا فاروقی جھوٹ بول رہی ہیں۔

عذیرکی والدہ کا کہنا تھا کہ نبیل گبول اور آصف زرداری نے عزیر بلوچ کےریڈوارنٹ نکلوائے تھے، جن کے خلاف میں نے اسلام آباد ہائی کوٹ میں اپیل بھی دائر کی تھی۔

انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی کے رہنماؤں سےسوال کرتی ہوں کہ اب وہ میرے بیٹےکو کیوں نہیں پہچان رہے؟

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں