The news is by your side.

Advertisement

ٹک ٹاک کی وائرل ویڈیو نے 16 سالہ لڑکی کی جان بچا لی

امریکا میں ٹک ٹاک کی ایک وائرل ویڈیو ایک 16 سالہ لڑکی کی جان بچانے کا سبب بن گئی، ویڈیو میں بتایا گیا ہے کہ خطرے کی زد میں ہونے کی صورت میں کس طرح سگنل دیا جائے۔

یہ واقعہ امریکی ریاست شمالی کیرولینا میں پیش آیا، 911 کو موصول ہونے والی کال میں ایک شخص نے کہا کہ اس کے سامنے جاتی کار میں ایک کم عمر لڑکی موجود ہے جو خطرے کا سگنل دے رہی ہے۔

پولیس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے مذکورہ گاڑی کو روکا اور گاڑی چلانے والے 61 سالہ ہربرٹ برک نامی شخص کو گرفتار کرلیا۔

کار میں موجود لڑکی چند روز قبل لاپتہ ہوئی تھی جس کی گمشدگی کی رپورٹ اس کے والدین نے پولیس کو درج کروائی تھی۔

61 سالہ ملزم کی تلاشی کے بعد اس کے پاس سے چائلڈ پورنوگرافی کا مواد برآمد ہوا جبکہ اس نے 16 سالہ لڑکی کو بھی غیر قانونی طور پر حبس بے جا میں رکھا تھا۔

لڑکی کی جان بچانے والی یہ ویڈیو گزشتہ برس جون میں ٹک ٹاک پر وائرل ہوئی تھی، ویڈیو میں ایک خاتون اپنی دوست سے ویڈیو کال کے دوران ہاتھ سے چند مخصوص اشارے کرتی ہیں۔

ان اشاروں کا مطلب گھریلو تشدد یا گھر میں کسی خطرے کی نشاندہی کرنا، یا مدد طلب کرنا ہے۔

اس وقت یہ ویڈیو اس لیے بھی وائرل ہوئی کیونکہ لاک ڈاؤن کے دوران گھریلو تشدد میں بے پناہ اضافہ ہوگیا تھا۔ لاک ڈاؤن کے 8 ماہ کے دوران کرونا وائرس کے لاک ڈاؤن کی وجہ سے مردوں نے گھروں پر رہنا شروع کیا تو گھریلو تشدد میں غیر معمولی اضافہ دیکھنے میں آیا۔

اقوام متحدہ کے مطابق خواتین اپنے پرتشدد شوہر یا پارٹنرز کے ساتھ گھروں میں قید ہوگئیں اور ان کے لیے کوئی جائے فرار نہیں بچی۔

صرف برطانیہ میں گھریلو تشدد کے سبب ہاٹ لائن پر مدد مانگنے والوں کی تعداد میں 120 فیصد اضافہ ہوا، امریکا میں یہ شرح 20 فیصد زیادہ رہی۔

سوشل میڈیا صارفین کا کہنا تھا کہ اس ویڈیو کو زیادہ سے زیادہ وائرل کیا جانا چاہیئے تاکہ یہ ویڈیو گھروں میں تشدد کا شکار خواتین تک پہنچے اور وہ مدد طلب کرسکیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں