The news is by your side.

Advertisement

کلین انرجی کی طرف توجہ دینے سے فیول درآمد کرنے کی ضرورت پیش نہیں آئے گی،وزیراعظم

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ ہم کلین انرجی کی طرف توجہ دیں گے تاکہ فیول درآمدنہ کرنا پڑے۔

تفصیلات کے مطابق 1124میگاواٹ کوہالہ ہائیڈرو پاورپروجیکٹ سے متعلق تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاور سیکٹر میں بڑی سرمایہ کاری پر شکریہ ادا کرتاہوں،ہائیدرو پاور سیکٹرمیں ماضی میں دلچسپی نہیں لی گئی، پاکستان میں پانی سے بجلی پیدا کرنے کی بہت صلاحیت ہے۔

انہوں نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلی میں پاکستان کا 9واں نمبر ہے جو زیادہ متاثر ہوسکتا ہے،تیل سے بجلی پیدا کرنے کی وجہ سے ماحول پر بھی اثر پڑتا ہے،درآمدی فیول سے بجلی پیدا کر کے ملک پر ظلم کیا گیا۔

وزیراعظم پاکستان کا کہنا تھا کہ ہم کلین انرجی کی طرف توجہ دیں گے تاکہ فیول درآمد نہ کرنا پڑے۔انہوں نے مزید کہا کہ آزاد کشمیر میں اس پروجیکٹ سے روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے۔

اس سے قبل رواں سال فروری میں وفاقی وزیر عمر ایوب کا کہنا تھا کہ پاکستان میں ونڈ انرجی کے شعبے میں غیر ملکی کمپنیوں کے لیے سرمایہ کاری کے وسیع مواقع موجود ہیں، غیرملکی کمپنیاں پاکستان میں مصنوعات تیار کر کے دیگر ممالک کو برآمد کرسکتی ہیں۔

عمر ایوب کا کہنا تھا کہ حکومت نے متبادل ذرائع سے بجلی پیداور کا ہدف چار فیصد سے بڑھا کر تیس فیصد مقرر کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں