The news is by your side.

Advertisement

سوئیڈش حکام نے بچے کا نام ’ولادی میرپیوٹن‘ رکھنے سے کیوں روکا؟

اسٹاک ہوم : حکومت نے سوئیڈن جوڑے کی بچے کا نام ولادی میر پیوٹن رکھنے خواہش پر پانی پھیر دیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق سوئیڈن حکومت کی جانب سے نوجوان جوڑے کو بچے کا نام روسی صدر کے نام پر رکھنے سے روکا گیا ہے۔

غیر ملکی ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ بچے کا نام روسی صدر کے نام پر رکھنے کی درخواست سوئیڈش ٹیکس ادارے کی جانب سے رد کی گئی تھی۔

حکومت کی جانب سے بچے کا نام ولادی میر پیوٹن رکھنے کی درخواست منسوخ کرنے کی وجہ نہیں بتائی گئی تاہم اسکینڈے نیویا ممالک (ڈنمارک، سوئیڈن اور ناروے کو کہا جاتا ہے) کے قانون کے مطابق بچے کا ایسا نام رکھنا ممنوع ہے جو مستقبل میں بچے کے لیے مسائل کا باعث بنے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں