میجر اسحاق شہید کی اہلیہ نے بہترین "نشانے باز" کا اعزاز حاصل کرلیا
The news is by your side.

Advertisement

میجر اسحاق شہید کی اہلیہ نے بہترین “نشانے باز” کا اعزاز حاصل کرلیا

کراچی : شہید پاکستانی فوجی میجر اسحاق کی اہلیہ ڈاکٹر عائشہ نے اپنے شوہر کے نقش قدم پر چلتے ہوئے ملک کی خدمت کیلئے پاک فوج میں شمولیت اختیار کر لی ہے اور بہترین نشانے باز کا اعزاز حاصل کیا۔

تفصیلات کے مطابق میجر اسحاق کی شہادت کے بعد ان کی اہلیہ ڈاکٹر عائشہ نے ہار نہیں مانی اور آرمی میڈیکل کورس کے لئے درخواست دی اور منتخب ہوگئیں۔

ڈاکٹر عائشہ نے کامیابی کے ساتھ اسلام آباد اور کاکول اکیڈمی میں تمام مراحل کو مکمل کیا، انہوں نے جی تھری رائفل 200 میٹر کے فاصلے سے چلائی اور 16 میں سے 15 اہداف کو نشانہ بنانے میں کامیاب ہوئیں۔

جس کے بعد انہیں کورس کی بہترین نشانے باز‘ کا اعزاز دیا گیا۔

ایک بہت ہی خاص بات یہ ہے کہ یہ وہی بندوق تھی ، جس سے میجر اسحاق نے 40 راؤنڈ پر فائر کئے ، 20 راؤنڈ دائیں ہاتھ سے اور جب ان کا دائیں ہاتھ زخمی ہوا تو انہوں نے  باقی 20 راؤنڈ بائیں ہاتھ سے فائر کئے۔

مزید پڑھیں : ڈی آئی خان میں کارروائی، قوم کا ایک اور سپوت میجراسحاق شہید

یاد رہے کہ 22 نومبر 2017 میں ڈیرہ اسماعیل خان کے علاقے کلاچی میں پاک فوج نے دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کی تھی، جس میں میجر اسحاق نے دلیرانہ مقابلہ کرتے ہوئے دہشت گردوں کی فائرنگ سے جام شہادت نوش کیا تھا۔

میجر اسحاق کا تعلق خوشاب سے تھا۔

میجر اسحاق کی شہادت پر ڈی جی آئی ایس پی آر میجرجنرل آصف غفور نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا تھا کہ ہم مادروطن کی محبت کی یہ قیمت چکارہےہیں، یہ قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی، جانوں کےان نذرانوں پرکوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں