The news is by your side.

Advertisement

ڈاکٹرعامر لیاقت کی تدفین ہوگی یا پوسٹ مارٹم؟ معاملہ الجھ گیا، عدالت کا بڑا حکم

کراچی : رکن قومی اسمبلی ڈاکٹرعامر لیاقت کے پوسٹ مارٹم کا معاملہ الجھ گیا، عدالت نے پولیس سرجن کو میت کا جائزہ لینےکی ہدایت کردی، جس کے بعد عدالت پوسٹ مارٹم کا فیصلہ کرے گی۔

تفصیلات کے مطابق ڈاکٹرعامرلیاقت کے پوسٹ مارٹم کے معاملے پر جوڈیشل مجسٹریٹ نے پولیس سرجن کو میت کا جائزہ لینےکی ہدایت کردی۔

وکیل اہلخانہ خورشیدخان نے کہا کہ عدالت نے میت کی جانچ کے بعد رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی ہے، پولیس سرجن نےتاحال میت کا معائنہ نہیں کیاتھا۔

عدالتی حکم پر پولیس سرجن، ایم ایل او اور مجسٹریٹ سردخانےپہنچ گئے ، مجسٹریٹ اورپولیس سرجن نےلاش کامعائنہ شروع کردیا ہے ، میت کا جائزہ لیکررپورٹ مرتب کریں گے۔

مزید پڑھیں : ڈاکٹر عامر لیاقت کے ورثا کی لاش حوالگی کیلئے درخواست دائر

جس کے بعد رپورٹ عدالت پیش کی جائے گی ، عدالت پولیس سرجن کی رپورٹ کی روشنی میں پوسٹ مارٹم سے کا فیصلہ کرے گی۔

یاد رہے ڈاکٹر عامر لیاقت کے بیٹے نے پوسٹ مارٹم نہ کرنے اور میت حوالگی کی درخواست کی تھی ، جس میں کہا کہ اہل خانہ پوسٹ مارٹم نہیں کرواناچاہتے، جس کے بعد بیٹے کی درخواست پرعدالت نے سماعت مکمل کی۔

مزید پڑھیں : ڈاکٹرعامر لیاقت کا قتل ہوا یا طبی موت ہے؟

دوسری جانب پولیس نے بھی ڈاکٹر عامر لیاقت کی وجہ موت کی جانچ کیلئے پوسٹ مارٹم کی درخواست دائر کی تھی، جس میں کہا تھا کہ ڈاکٹرعامرلیاقت کاقتل ہوایاطبی موت ہے پتہ کرناہے، پوسٹ مارٹم کی اجازت دی جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں