The news is by your side.

Advertisement

دنیا کا پہلا تھری ڈی پرنٹنگ سے تیار شدہ پل

آپ نے تھری ڈی پرنٹنگ کے ذریعے بے شمار اشیا کی پرنٹنگ ہوتے دیکھی ہوگی، تاہم حال ہی میں یورپی ملک نیدر لینڈز میں تھری ڈی پرنٹنگ کی مدد سے کنکریٹ کا پل تیار کرلیا گیا ہے جو دنیا کا پہلا تھری ڈی پرنٹڈ پل ہے۔

ڈچ حکام کا کہنا ہے کہ یہ پل فی الحال صرف سائیکل سواروں کے لیے ہے۔

پل کو بنانے والے ٹیکنالوجی ماہرین کا کہنا ہے کہ اس پل کی ’پرنٹنگ‘ میں 3 ماہ کا عرصہ لگا ہے۔ اس میں مختلف اجزا کی 800 تہیں شامل ہیں جبکہ پرنٹنگ کے بعد بھی اس کی مضبوطی پر کام کیا گیا ہے۔

مزید پڑھیں: اپنا تھری ڈی ہمزاد تیار کریں

ان کے مطابق اس کا سب سے بڑا فائدہ یہ ہے ایک عام پل بنانے کے مقابلے میں تھری ڈی پل پرنٹ کرتے ہوئے کنکریٹ کا استعمال کم ہوتا ہے۔

ندی کے اوپر بنایا جانے والا 26 فٹ طویل یہ پل تکمیل کے بعد ٹیسٹ کیا گیا جس کے بعد علم ہوا کہ یہ 2 ٹن کا وزن اٹھا سکتا ہے اور اس پر سے 40 ٹرک روز گزر سکتے ہیں، تاہم حفاظت کے پیش نظر اسے فی الحال صرف سائیکل اور موٹر سائیکل سواروں کے لیے مختص کیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ اس سے قبل اسپین کے دارالحکومت میڈرڈ میں بھی ایک تھری ڈی پرنٹنگ سے تیار شدہ پل نصب کیا گیا تھا تاہم وہ صرف پیدل چلنے والوں کے لیے مخصوص تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں