The news is by your side.

Advertisement

یاسین ملک کی اہلیہ کا شوہر کی سزا کے فیصلے کے خلاف عالمی عدالت انصاف سے رجوع کرنے کا اعلان

اسلام آباد : حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک نے شوہر کی سزا کے فیصلے کے خلاف عالمی عدالت انصاف سے رجوع کرنے کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک کی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میں یاسین ملک کا مقدمہ عالمی عدالت میں لے کر جاؤں گی، یاسین ملک کو کالے قانون کے تحت سزادی گئی، جب فیصلہ سنایا گیا تو انہیں دفاع کا موقع نہیں دیا گیا، میں اس فیصلے کو مسترد کرتی ہوں۔

مشعال ملک کا کہنا تھا کہ دنیا سے پوچھتی ہوں کہ ہر قیدی کو مفت کاؤنسلنگ کی سہولت فراہم کی جاتی ہے مگر کشمیر میں حریت رہنما کو کیوں نہیں دی گئی، بین الا قوامی قانون پر سوالیہ نشان ہے، عدالت کی سماعت میں انٹرنیشنل آبزور کو رسائی کیوں نہیں دی جاتی۔

انھوں نے کہا کہ یاسین ملک نے بھارتی عدالت سے جوسوال کیے اس کے جواب نہیں ملے ، یاسین ملک نےجج سےکہاکہ زندگی کی بھیک نہیں مانگیں گے

یاسین ملک کی اہلیہ کا کہنا تھا کہ کشمیر ی مودی کی صورت میں وقت کےیزیدکامقابلہ کررہےہیں، کشمیری قوم یاسین ملک کی قربانیوں کوکبھی فراموش نہیں کرے گی، یاسین ملک کی بہادری اور ہمت پرفخر ہے، تمام کشمیری یاسین ملک کے مشن کو آگے بڑھائیں گے۔

مشعال ملک نے مزید کہا کہ بھارت نےاقوام متحدہ کی قرادروں کومستردکیاہے، نظرانہ دینےکیلئےزندگی بہت چھوٹی چیزہے، یاسین ملک اکیلے نہیں ہیں، اقوام متحدہ کی قرارداد کےمطابق یہ سیاسی تحریک ہے، میں کشمیر ی قوم کے لیے جنگ لڑوں گی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ یاسین ملک کیس میں میڈیا پر بتایا گیا کہ عمرقیدہوجائےگی، بڑے سے بڑے مجرم کو بولنے کا حق دیا جاتا ہے، ایڈیشنل سیشن جج نےیاسین ملک کو بولنے کا موقع تک نہیں دیا۔

اہلیہ یاسین ملک نے مزید کہا کہ افضل گرو شہید کیس کے بارے میں سب کو معلوم ہے، کشمیریوں نے جتنی قربانیاں دیں کسی نے نہیں دیں، آج کا ہٹلر مودی ہے اور کوئی نہیں ہے، یاسین ملک اکیلا نہیں ہے ہر بچہ یاسین ملک ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں