The news is by your side.

Advertisement

زلمے خلیل زاد طالبان سے دوبارہ مذاکرات کریں گے: امریکی محکمہ خارجہ

واشنگٹن: امریکی محکمہ خارجہ نے کہا ہے کہ زلمے خلیل زاد طالبان سے دوبارہ مذاکرات کریں گے، جس کے لیے وہ دوحا جائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق امریکا کے خصوصی نمایندے زلمے خلیل زاد افغان امن مذاکرات کے لیے دوحا، قطر جائیں گے، امریکی محکمہ خارجہ کا کہنا ہے کہ امن مذاکرات دوبارہ شروع کرنے کے لیے کوششیں جاری ہیں۔

امریکی محکمہ خارجہ کا یہ بھی کہنا تھا کہ افغان امن سے متعلق نیٹو سے بھی مشاورت کی جا رہی ہے، ادھر افغان میڈیا کا کہنا ہے کہ زلمے خلیل زاد نے افغان صدر اشرف غنی سے کابل میں اہم ملاقات کی ہے، جس میں افغان امن عمل اور مذاکرات کی بحالی سمیت مختلف امور پر بات چیت کی گئی۔

یہ بھی پڑھیں:  افغان امن مذاکرات کی منسوخی کا سب سے زیادہ نقصان امریکا کو ہوگا، ترجمان طالبان

واضح رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے افغان امن مذاکرات کی منسوخی پر طالبان ترجمان ذبیح اللہ نے کہا تھا کہ امن مذاکرات کی منسوخی کا سب سے زیادہ نقصان امریکا ہی کو پہنچے گا، اس کا اعتماد اور ساکھ متاثر ہوگی۔ ترجمان نے ٹویٹر پر کہا تھا کہ امریکی ٹیم کے ساتھ مذاکرات مفید جا رہے تھے اور معاہدہ مکمل ہو چکا تھا، فریقین معاہدے کے اعلان اور دستخط کی تیاریوں میں مصروف تھے کہ امریکی صدر نے مذاکراتی سلسلے کو منسوخ کرنے کا اعلان کر دیا۔

یاد رہے کہ 8 ستمبر کو امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے طالبان کی جانب سے کابل حملے کی ذمہ داری قبول کرنے کے بعد امن مذاکرات منسوخ کر دیے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں