The news is by your side.

Advertisement

میری کسی سے ڈیل ہوتی، تو اسماعیل ڈاہری گرفتارنہ ہوتے: آصف زرداری

خان نے خود ہی دروازے بند کر دیے، جب سےروٹھے ہیں، تب سے نوازشریف سےنہیں ملے

کراچی: پاکستان پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ انتخابات میں تاخیرکی آئین میں گنجائش نہیں.

سابق صدر کا کہنا تھا کہ سیاسی جماعتوں کو ہر صورت الیکشن کمیشن کو مضبوط بنانا ہوگا، یہی جمہوریت کی ضرورت ہے.

جس جماعت کو بھی حکومت بنانی ہوگی، اسے ہر صورت پیپلزپارٹی سے بات کرنی ہوگی

آصف علی زرداری

آصف زرداری نے کہا کہ خان صاحب تو کہہ چکے ہیں کہ وہ میرے ساتھ نہیں بیٹھنا چاہتے، عمران خان کی مجھ پرتنقید ان کا حق ہے. البتہ خان صاحب نے سارے دروازے خود بند کر دیے.

ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہا کہ میں ارتقا پریقین رکھتا ہوں، انقلاب پرنہیں، میرا وزیر اعظم کا امیدوار بلاول بھٹو زرداری ہے.

انھوں نے منظور وٹو سے متعلق کہا کہ کو کسی نے ان سے کہا ہے کہ یہ آپ کا آخری الیکشن ہے، آزاد لڑیں، ویسے بھی منظوروٹوپیپلزپارٹی سےفارغ ہوگئے ہیں اور اس وقت ہرجگہ آزاد امیدوارکھڑے ہو رہے ہیں.

انھوں نے دعویٰ کیا کہ جس جماعت کو بھی حکومت بنانی ہوگی، اسے ہر صورت پیپلزپارٹی سے بات کرنی ہوگی.

آصف علی زرداری نے کہا کہ اسماعیل ڈاہری کی گرفتاری کسی کی ادا ہے، ہرادا ایک پیغام ہوتا ہے، اسماعیل ڈاہری میرا کارکن ہے، جس کو میرے گھر کے قریب سے گرفتارکیا گیا، میری کسی سے ڈیل ہوتی تو اسماعیل ڈاہری گرفتارنہ ہوتے۔

ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہا کہ ن لیگ اورپی ٹی آئی بنی نہیں تھیں، یہ بنائی گئی تھیں، نوازشریف سے لاہورمیں کوئی ملاقات نہیں ہوئی،  جب سےروٹھے ہیں، تب سے نوازشریف سےنہیں ملے۔


ہم عوام کی طاقت اور مخالفین چور دروازے سے اقتدار میں آتے ہیں، آصف زرداری


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں