The news is by your side.

Advertisement

بنگلہ دیش:حزب اختلاف کی جماعتوں نے پر تشدد ترین انتخابات کو مسترد کردیا

بنگلہ دیش کی حزب اختلاف کی جماعتوں نے ملک کی تاریخ کے پر تشدد ترین انتخابات کو مسترد کردیا ہے، اپوزیشن رہنما خالدہ ضیا نے غیر جانبدار اورغیر سیاسی انتظامیہ کے تحت نئے انتخابات کروانے کا مطالبہ کردیا ہے۔

بنگلہ دیش کی حکمراں جماعت عوامی لیگ نےعام انتخابات میں کامیابی حاصل کرلی ہے لیکن یہ نتائج کسی سے پوشیدہ نہیں تھے کیونکہ خالدہ ضیا کی بنگلہ دیش نیشنلسٹ پارٹی کی زیر قیادت اٹھارہ جماعتی اپوزیشن اتحاد نے الیکشن کا بائیکاٹ کیا، جس کے باعث حکمراں جماعت کے ایک سو تریپن امیدوار تو پہلے ہی بلامقابلہ منتخب ہوچکے تھے۔

پولنگ کے دوران پورے ملک میں شدید ہنگامہ آرائی ہوئی، پولیس کے مطابق انتخابات کے دوران پر تشدد واقعات میں بیس سے زائد افراد ہلاک ہوئے اور نامعلوم افراد کی جانب سے دو سو سے زائد پولنگ اسٹیشن نذر آتش کر دیئے گئے، اطلاعات کے مطابق تقریباً بیس فیصد ہی ووٹ ڈالے گئے، جس پر اپوزیشن رہنما خالدہ نے غیر جانبدار اور غیر سیاسی انتظامیہ کے تحت نئے انتخابات کا مطالبہ کردیا ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ عوام نے یک طرفہ انتخابات کو مسترد کردیا ہے، بنگلہ دیشی وزیراعظم شیخ حسینہ واجد نے بھی اپوزیشن کا پرتشدد مظاہرے ختم کرنے پر نئے انتخابات کرانے پر غور کی تجویز دی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں