جنگ جیو کا کارنامہ، گلگت کو پاکستان سے الگ کردیا -
The news is by your side.

Advertisement

جنگ جیو کا کارنامہ، گلگت کو پاکستان سے الگ کردیا

کراچی : جنگ گروپ نے میر شکیل کے خلاف فیصلہ آنے پر گلگت بلتستان کو پاکستان سے باہر قرار دے دیا ہے۔

جیو کی پاکستان کی اکائی پر ضرب لگانے کی ایک اور گھناؤنی کوشش، میر شکیل کے خلاف عدالتی فیصلہ آنے پر گلگت بلتستان کو پاکستان سے باہر قرار دینے پر تُل گیا، گلگت بلتستان کی عدالتیں پاکستانی شہری کے خلاف فیصلہ نہیں دی سکتیں، یہ کہہ کر جیو نے بھارت کی آشاکا اظہار کر ڈالا جبکہ جولائی دوہزار دس میں گلگت بلتستان کی عدالت فیصلہ دی چکی ہے کہ گلگت پاکستان کا حصہ ہے۔

اگر جیو اور میر شکیل کوعدالت کے فیصلے پر اعتراض ہے تو دوران سماعت رجوع کرکے اپنا موقف کیوں پیش نہیں کیا؟ لیکن جیو گروپ ایک بار پھر ایسے نکات کو سامنے لایا جس سے ملکی اور بین الاقوامی رائے عامہ کو گمراہ کیا جاسکے اور بھارت کو ایک بار پھر پاکستان کے خلاف بولنے کا موقع مل جائے، بالکل اسی طرح جب انیس اپریل دوہزار چودہ کو حامد میر پرقاتلانہ حملے کا ذمہ دار سابق ڈی جی آئی ایس آئی کوٹھہرا کر دنیا بھر میں پاکستان کی جگ ہنسائی کا سبب بنا تھا۔

عدالت کے فیصلے پر اعتراض اٹھانے والے قانون کے اتنے ہی پابند ہیں، رات کی تاریکی میں منہ چھپا کر ملک سے فرارہونے کے بجائے عدالت پیش ہو جاتے، میر شکیل اگر گلگت بلتستان پاکستان نہیں تو کارگل جنگ کے شہید جوان لالک جان کو ملک کا سب سے اعلی اعزاز نشان حیدر کیوں دیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں