The news is by your side.

Advertisement

داعش کی پاکستان میں کاروائیوں کےلئے منصوبہ بندی

اسلام آباد: داعش کی جانب سے پاکستان میں کاروائیوں کیلئے منصوبہ بندی کر لی گئی ہے۔داعش اس حوالے سے پاکستان میں پہلے سے موجود شدت پسند اور مذہبی تنظیموں سے رابطہ کر رہی ہے۔

اے آروائی نیوز نے بلوچستان حکومت کا نیکٹا سمیت حساس اداروں کو لکھے جانے والے خفیہ مراسلہ حاصل کرلیا، جس میں کالعدم تنظیم داعش کی مختلف شہروں میں دہشتگردی کی منصوبہ بندی اور مذہبی تنظیموں سے رابطے کا انکشاف کیا گیا ہے۔

جنگجو تنظیم داعش نے عراق اور شام کے بعد اب پاکستان کا رخ کرلیا ہے۔ وفاقی حکومت نے اس بات سے انکار کر دیا ہے۔ لیکن بلوچستان حکومت نے داعش کی موجودگی اور ان کے رابطوں کا نہ صرف اعتراف کرلیا ہے بلکہ اس بارے میں نیکٹا اور حساس اداروں کو مراسلہ بھی لکھ دیا ہے۔ جس کی کاپی اے آر وائی نیوز نے حاصل کرلی ہے۔

مراسلے میں کہا گیا ہے کہ داعش نے پاکستان میں اپنا نیٹ ورک مظبوط کرنے کیلئے مذہبی تنظیموں سے رابطے کیلئے  دس رکنی خصوصی ونگ تشکیل دے دیا ہے۔ جو لشکر جھنگوی کے ساتھ مل کر آپریشن ضرب عضب میں حصہ لینے والی پاک آرمی کو نشانہ بنا سکتا ہے۔

مراسلے کے مطابق داعش نے ہنگو اور کرم ایجنسی میں اپنے دس سے بارہ ہزار حامیوں کی موجودگی کا بھی انکشاف کیا ہے۔ داعش کا پہلا ہدف خیبر پختونخوا میں سرکاری تنصیبات ہونگی۔ خفیہ مراسلہ رواں برس اکتیس اکتوبر کو لکھا گیا تھا۔ جس میں آئی جی پولیس ،ڈویژنل کمشنر ،ڈپٹی کمشنرز اور ریجنل پولیس آفیسرز کو محتاط رہنے کی ہدایت بھی کی گئیں ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں