site
stats
سپریم کورٹ

شجاعت عظیم کیخلاف سپریم کورٹ میں درخواست دائر

اسلام آباد: وزیراعظم کے معاون خصوصی شجاعت عظیم کے خلاف توہین عدالت کی درخواست سپریم کورٹ میں دائر کردی گئی ۔ روال پنڈی سے تعلق رکھنے والے درخواست گذار منصور احمد نے درخواست میں موقف اختیار کیا ہے کہ شجاعت عظیم نے انڈر آرٹیکل 204 آئین پاکستان 1973 ء کی خلاف ورزی کی ہے۔،

درخواست میں وزیراعظم کے پرنسپل سیکریٹری جاوید اسلم ملک، ڈپٹی سیکریٹری کیبنٹ ڈویژن سراج احمد کو فریق بنایا گیا ہے۔ درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ سابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے شجاعت عظیم کے خلاف ازخود نوٹس لیتے ہوئے انہیں دو عہدے رکھنے پر برطرف کرنے کی ہدایت کی تھی جس پر شجاعت عظیم مستعفیٰ ہوگئے تھے۔

سابق چیف جسٹس کی ریٹائرمنٹ کے بعد وزیراعظم نے چوہدری شجاعت کو ہوا بازی کا معاون خصوصی مقرر کیا،پاک فضائیہ سے سزایافتہ شجاعت عظیم کو اہم محکموں کا سربراہ بھی بنایا گیا۔

سول ایوی ایشن، پی آئی اے ، اے ایس ایف ، محکمہ موسمیات شامل ہیں، ان تمام محکموں میں حاضر سروس کے افسران ڈیوٹی انجام دے رہے ہیں،درخواست گزار کا مؤقف تھا کہ شجاعت عظیم پاک فضائی سے سزا یافتہ ہیں جن کا کورٹ مارشل ہوا تھا۔

درخواست گذار کے مطابق شجاعت عظیم نے اعلیٰ عدلیہ کے صادر فیصلے کی توہین کی ہے اس لیے کریمنل ایکٹ کے تحت انہیں سزا دی جائے ۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top