The news is by your side.

Advertisement

لاہور ہائی کورٹ: گلو بٹ کی نظربندی غیر قانونی قرار، رہائی کاحکم

لاہور: ہائیکورٹ نے سانحہ ماڈل ٹاؤن میں توڑ پھوڑ کرنے والے ملزم گلو بٹ کی نظربندی کو غیرقانونی قرار دیتے ہوئے رہائی کا حکم دے دیا ہے۔

لاہور ہائیکورٹ میں جسٹس محمد قاسم خان نے گلو بٹ نظر بندی کیس کی سماعت کی، حکومتِ پنجاب کی جانب سے مؤقف اختیار کیا گیا کہ گلو بٹ کو نقص امن کے خدشے کی وجہ سے نظر بند کیا گیا، گلوبٹ نے منہاج القرآن کے باہر توڑ پھوڑ کی، جس سے دہشت پھیلی، ملزم کے اس قدام کیخلاف پورے ملک میں غم و غصے کی لہر پھیل چکی ہے۔

گلو بٹ کے وکیل نے دلائل دیئے کہ ملزم منہاج القرآن کے واقعہ سے پہلے کسی غیرقانونی سرگرمی میں ملوث نہیں رہا، اس مقدمہ میں بھی تمام دفعات قابل ضمانت تھیں، پولیس نے بدنیتی سے دہشتگردی اور اقدام قتل کی دفعات شامل کیں۔

اسی لئے ہائیکورٹ نے ملزم کی ضمانت منظور کی لیکن حکومت نے سیاسی بنیادوں پر گلو بٹ نظربند کر دیا، عدالت نے گلوبٹ کی نظربندی کو غیرقانونی قرار دیتے ہوئے ملزم کی رہائی کا حکم دے دیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں