The news is by your side.

Advertisement

کراچی: جرائم پیشہ افراد پر کڑی نظر رکھنے کا منصوبہ

کراچی: شہر قائد میں بڑھتے اسٹریٹ کرائمز سے نمٹنے کے لئے سندھ پولیس نے جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ حاصل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق جرائم پیشہ عناصر کی سرکوبی کیلئے سندھ پولیس پاکستان میں پہلی بار ای ٹیگ ٹیکنالوجی استعمال کرےگی، ایڈیشنل آئی جی کراچی نے ای ٹیگنگ ڈیوائس کامسودہ تیار کرلیا ہے۔

یہ ای ٹیگنگ اسٹریٹ کرائمز کرنے والے، گاڑیاں، موٹر سائیکلیں اور فون چھیننے والے، گھروں، بینکوں اور دکانوں میں ڈکیتیاں کرنے والے افراد کی نگرانی کے لیے کی جائے گی۔

چند روز قبل کراچی پولیس نے سندھ حکومت سے مجرموں کی ای ٹیگنگ کرنے کی سفارش کی تھی اور سات ہزار سے زائد مجرموں کی ای ٹیگنگ کا ایک پلان شیئر کیا تھا،  اے آر وائی نیوز نے اگست 2020 میں ای ٹیگ کی خبر نشر کی تھی۔

اس حوالے سے ایڈیشنل آئی جی کراچی غلام نبی میمن کا کہنا تھا کہ اب ملزمان کی مانیٹرنگ کے لیے ای ٹیگنگ اب ناگزیر ہوگئی ہے، وزیراعلی سندھ کا شکریہ انہوں نے ہماری ہر سفارش مان لی، تقریبا 11 ہزار سےزائد ملزمان کوڈیوائس لگائی جائے گی۔

ایڈیشنل آئی جی کراچی نے بتایا کہ دنیا میں جرم دہرانے والے ملزم کو ای ٹیگنگ کیا جاتا ہے، امریکا یورپ اور خلیجی ممالک میں بھی یہ نظام مشہور ہے، انہوں نے دعویٰ کیا کہ دنیا کےکسی بڑے شہر کےمقابلے میں کراچی میں جرائم کم ہیں ۔

قانونی مسودے میں کہا گیا تھا کہ جرم دہرانے پرکم سے کم 2 سال الیکٹرانک ڈیوائس لگائی جائے گی، قانون سازی کے بعد ضمانت صرف حلف نامہ جمع کرانےپر ہوسکےگی، حلف نامےمیں مخصوص علاقےمیں رہنےکی یقین دہانی کرائی جائےگی۔

اس دوران جی پی ایس کے ذریعے ڈیوائس کی لائیو مانیٹرنگ کی جائے گی اور ملزم کو مخصوص علاقے تک ہی نقل و حرکت کی اجازت ہوگی،ای ڈیوائس سے ملزم بھی جیل کے بجائے گھر پر رہ سکے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں