The news is by your side.

Advertisement

برازیلی صدر کو 10 دن سے ہچکیاں، اسپتال داخل

ساؤپالو: برازیل کے صدر جائر بولسونارو 10 روز سے مسلسل ہچکیوں کے شکار ہیں، جس پر انھیں اسپتال داخل کر دیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ہچکیوں کے شکار برازیلی صدر ڈاکٹر سے مشورے کے بعد بدھ کو ساؤپالو اسپتال میں داخل ہو گئے ہیں، جائر بولسونارو کی آنت میں ممکنہ رکاوٹ کی تشخیص کے لیے ٹیسٹ کیے جا رہے ہیں۔

صدارتی دفتر کا کہنا ہے کہ ہچکیوں کے باعث ایمرجنسی سرجری کی ضرورت پیش آ سکتی ہے، نیز 66 سالہ صدر کو اسپتال منتقل کرنے سے قبل بے ہوش کیا گیا تھا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق 3 جولائی کو برازیلی صدر کی دانتوں کی پیوندکاری کی گئی تھی، جس کے بعد انھیں مسلسل ہچکیوں کی شکایت لاحق ہو گئی۔

چند دن قبل صدر بولسونارو کے بیٹے نے ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ ان کے معدے سے پانی اوپر آتا تھا، جو سانس میں لینے میں رکاوٹ بنتا تھا، اس لیے انھیں ٹیوب لگانی پڑی۔

برازیلی صدر 2020 میں کرونا وائرس انفیکشن کا بھی شکار ہوئے تھے، جس کے بعد انھیں مسلسل کھانسی رہنے لگی، اور 2018 میں صدارتی انتخابات کی مہم کے دوران انھیں ایک شخص نے چھرا گھونپ دیا تھا، جس کے بعد انھیں کئی آپریشنز سے گزرنا پڑا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں