The news is by your side.

Advertisement

11 کمپنیوں کا فیصل آباد میں 43 ارب کی سرمایہ کاری کرنے کا اعلان

لاہور: وزیراعظم عمران خان کی طرف سے پر کشش مراعات کے بعد ابتدائی طور پر مزید گیارہ بین الاقوامی اور مقامی کمپنیوں نے فیصل آباد میں43 ارب روپے کی سرمایہ کاری کا اعلان کردیا، جنہیں ٹیکس ہالیڈے اور ایک بار ڈیوٹی فری مشینری درآمد کرنے کی اجازت بھی ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق فیصل آباد انڈسٹریل اسٹیٹ ڈویلپمنٹ اینڈ مینجمنٹ کمپنی (فیڈمک) کی اعلیٰ اختیاراتی خصوصی اقتصادی زون کمیٹی نے گیارہ بین الاقوامی اور مقامی کمپنیوں کو زون انٹرپرائز کی حیثیت دے دی۔ ایم تھری موٹر وے پر واقع یہ اہم ترین انڈسٹریل سٹی 4356 ایکڑ رقبے پر پھیلا ہوا ہے جس میں 10 سالہ ٹیکس چھوٹ اور ایک مرتبہ مشینری کی ڈیوٹی فری درآمد کی سہولت حاصل ہو گی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ فیصلہ فیڈمک کے چیئرمین میاں کاشف اشفاق کی زیر صدارت اعلیٰ سطح کے اجلاس میں کیا گیا جس میں بورڈ آف انویسٹمنٹ کے سیکرٹری عمر رسول، فیڈمک کے چیف آپریٹنگ آفیسر عامر سلیمی، پنجاب بورڈ آف انفارمیشن ٹیکنالوجی کے حکام اور دیگر بھی شریک تھے۔ ایکسپورٹ سے وابستہ اور امپورٹس کی متبادل انڈسٹری کو فیصلے میں ترجیح دی گئی تاکہ برآمدات کے فروغ اور امپورٹ بل میں کمی کی حوصلہ افزائی کی جا سکے۔

اس موقع پر میاں کاشف اشفاق نے کہا کہ 42 بین الاقوامی اور مقامی کمپنیوں کو پہلے ہی یہ سٹیٹس حاصل ہے اور اب یہ تعداد 53 تک پہنچ گئی ہے جو صوبے میں صنعتکاری کے میدان میں فیڈمک کا ایک اور سنگ میل ہے۔ یہ 11 کمپنیاں پہلے مرحلے میں 43 ارب کی سرمایہ کاری کریں گی۔ انہوں نے کہا کہ فیڈمک میں کام کرنے والی صنعتوں کو اعلیٰ معیار کا بنیادی ڈھانچہ، بلا رکاوٹ بجلی کی سپلائی، عوامی سہولیات اور خدمات تک رسائی حاصل ہوگی۔

انہوں نے مزید کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کی طرف سے غیر ملکی اور مقامی سرمایہ کاروں کو پیش کردہ بے مثال پرکشش مراعاتی پیکیج نئی ملازمتوں، سرمایہ کاری کے فروغ اور نئے صنعتی یونٹوں کے قیام کی بنیاد بنے گا۔ کسٹمرز کو سٹیٹ آف دی آرٹ سہولیات کی فراہمی اور ون ونڈو آپریشن کے ذریعہ ترجیحی بنیادوں پر مسائل کا حل فیڈمک کا طرہ امتیاز ہے۔ ایم تھری موٹر وے کی تکمیل سے سرمایہ کاروں کا اعتماد بحال ہو رہا ہے۔

انہوں نے حکومت کی جانب سے کاروباری آسانیوں اور غیر ملکی سرمایہ کاری کیلئے دی گئی سہولیات پر بھی روشنی ڈالی اور کہا کہ پالیسیوں میں تسلسل معاشی استحکام کیلئے انتہائی ضروری ہے۔ میاں کاشف اشفاق نے کہا کہ موجودہ حکومت اچھی حکمرانی، شفافیت اور بدعنوانی کے خاتمے پر خصوصی توجہ دے رہی ہے اور وزیراعظم عمران خان نے ملک کو معاشی بحران سے نکالنے اور اسے اسلامی فلاحی ریاست بنانے کیلئے دن رات ایک کر رکھا ہے جس کے نتیجے میں اقتصادی اشاریے بہتر ہو رہے ہیں۔

سیکرٹری سرمایہ کاری بورڈ عمر رسول نے کہا کہ حکومت برآمدات کے فروغ، صنعتی ترقی، اور غیر ملکی سرمایہ کاری پر توجہ مرکوز کر رہی ہے اور پاکستان ہر شعبے میں غیر ملکی سرمایہ کاروں کو برابر کے مواقع اور سہولیات فراہم کر رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان میں آٹوموبائلز، فوڈ پراسیسنگ، انفارمیشن ٹیکنالوجی، لاجسٹکس، ویلیو ایڈڈ ٹیکسٹائل اور سیاحت کے شعبوں میں سرمایہ کاری کے لئے مسابقت پر مبنی مواقع میسر ہیں۔

کاروباری لاگت کو کم کرنے اور کاروباری آسانیاں پیدا کرنے کے لئے کوششیں جاری ہیں اور رواں سال کے آخر تک اس میں نمایاں بہتری سامنے آئے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں