تازہ ترین

’پاکستان کیلیے آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک سے اچھی خبریں آئیں گی‘

امریکا میں پاکستان کے سفیر مسعود خان نے کہا...

پاکستان کے بیلسٹک میزائل پروگرام کے حوالے سے ترجمان دفتر خارجہ کا اہم بیان

اسلام آباد : پاکستان کے بیلسٹک میزائل پروگرام کے...

ملازمین کے لئے خوشخبری: حکومت نے بڑی مشکل آسان کردی

اسلام آباد: حکومت نے اہم تعیناتیوں کی پالیسی میں...

ضمنی انتخابات میں فوج اور سول آرمڈ فورسز تعینات کرنے کی منظوری

اسلام آباد : ضمنی انتخابات میں فوج اور سول...

طویل مدتی قرض پروگرام : آئی ایم ایف نے پاکستان کی درخواست منظور کرلی

اسلام آباد: عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے...

مسجد الحرام کے اطراف سے 4 ہزار بھکاری گرفتار

سعودی عرب کی پولیس ماہ رمضان المبارک میں مسجد الحرام کے اطراف سے 4 ہزار سے زائد بھکاریوں کو گرفتار کر لیا ہے۔

ماہ رمضان میں جہاں دنیا بھر سے زائرین عمرہ عبادت کا ذوق وشوق لے کر سعودی عرب کا رخ کرتے ہیں اور مسجد الحرام و مسجد نبوی ﷺ میں عبادات میں مشغول ہو جاتے ہیں وہیں ایسے پیشہ ور بھکاریوں کی بھی کمی نہیں جو اس مبارک ماہ میں بھیک مانگنے کے لیے سعودی عرب آتی ہے۔

عرب میڈیا کے مطابق امسال سعودی عرب نے ایسے ہی پیشہ ور بھکاریوں کے خلاف بڑی کارروائی کرتے ہوئے مسجد الحرام کے اطراف سے 4 ہزار سے زائد بھکاریوں کو گرفتار کیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق ان پکڑے گئے بھکاریوں کو ابتدائی طور پر تھانے میں رکھا گیا ہے تاہم قانونی سزا کے بعد تمام ملزمان کو ان کے آبائی وطن واپس بھیج دیا جائے گا۔

واضح رہے کہ سعودی وزارت داخلہ کی جانب سے اس کارروائی کے عبد یہ بیان بھی جاری کیا گیا ہے کہ مسجد الحرام کے بعد مسجد نبوی ﷺ اور دیگر مقدس مقامات سمیت بڑی مساجد کے اطراف بھی بھکاریوں کے خلاف آپریشن کیا جائے گا۔

سعودی وزارت داخلہ کی جانب سے جاری بیان میں گداگری کی حوصلہ شکنی کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ پیشہ ور بھکاری امن کے لیے خطرہ بن سکتے ہیں اور ان کی آڑ میں دہشت گرد تنظیمیں بھی فنڈز جمع کرسکتی ہیں۔

مسجد الحرام کی تیسری توسیع میں پہلی بار کیا قائم ہوا؟

بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ پیشہ ور بھکاری منظم مافیا کا حصہ ہیں۔ اس لیے کسی کو صدقہ خیرات نہ دیں۔

Comments

- Advertisement -