The news is by your side.

Advertisement

’اسٹرنگز بینڈ‘ ٹوٹنے کی وجہ سامنے آگئی

کراچی: ماضی کے مقبول ترین بینڈ اسٹرنگز کے رکن فیصل کپاڈیہ نے 33 برس کے طویل عرصے میں مداحوں کو بہترین میوزک دینے کے بعد اچانک بینڈ کے خاتمے کی وجہ بتادی۔

فیصل کپاڈیہ نے ایک انٹرویو کے دوران بتایا کہ تین چار سال قبل ہی ہم نے بینڈ کے خاتمے کے بارے میں سوچنا شروع کردیا تھا۔

انہوں نے بتایا کہ بینڈ نے متفقہ رائے سے فیصلہ کیا تھا کہ بینڈ ختم کرنے کا یہی وقت ٹھیک ہے ورنہ آہستہ آہستہ ہماری شہرت زوال پذیر ہوتی جائے گی۔

فیصل کپاڈیہ نے بتایا کہ وہ اور بلال مقصود 50 برس کے ہوچکے ہیں اور یہ عمر فیملی کے ساتھ وقت گزارنے کے لیے بہترین ہے۔

مزید پڑھیں: اسٹرنگز بینڈ کو 33 سال بعد ختم کرنے کا اعلان

واضح رہے کہ رواں برس مارچ میں سوشل میڈیا پر سرگرم اسٹرنگز کی جانب سے اچانک بینڈ کو ختم کرنے کا اعلان کردیا گیا تھا اور فیصل کپاڈیا، بلال مقصود، عدیل علی، حیدر علی، احمد نیانی اور بریڈلے ڈی سوزا پر مشتمل اس بینڈ کا 33 سالہ سفر تمام ہوا۔

خیال رہے کہ 30 سالوں تک میوزک انڈسٹری پر راج کرنے والے ‘اسٹرنگز’ نے معروف البمز دور اور دھانی سمیت نہ جانے کیوں، آخری الوداع، سر کیے یہ پہاڑ اور کوئی آنے والا ہے جیسے مشہور گانے مداحوں کیلئے پیش کیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں