The news is by your side.

Advertisement

دوسرے سیاروں پر زندگی حقیقت؟ زمین جیسے 7 نئے سیارے دریافت

ماہرین فلکیات کی زمین کے جیسے قابل رہائش سیارے کی طویل تلاش رنگ لے آئی اور خلا میں زمین کے جیسے 7 سیارے دریافت کر لیے گئے۔ سائنس دانوں کے مطابق ان سیاروں میں سے 3 پر پانی کی موجودگی کا امکان ہے جن کے باعث یہ سیارے قابل رہائش ہوسکتے ہیں۔

ناسا کے مطابق ساتوں سیارے لگ بھگ زمین ہی کی جسامت اور ہجم جیسے ہیں اور ان کا زیادہ تر علاقہ پتھریلا ہے۔ یہ سیارے ایک ہی ستارے کے گرد گھوم رہے ہیں، گویا یہ زمین کے نظام شمسی جیسا نیا نظام ہے۔

discovery-2

ماہرین نے اس نظام کو ٹریپسٹ 1 نظام کا نام دیا ہے۔ یہ زمین سے 39 نوری سال کے فاصلے پر موجود ہے اور یہ زون یا علاقہ نہ تو اتنا گرم ہے جہاں پانی فوراً بھاپ بن جائے اور نہ ہی اتنا سرد ہے کہ ہر چیز منجمد ہوجائے۔ گویا یہ زندگی کے لیے نہایت سازگار ماحول ہے۔

دریافت کے متعلق شائع ہونے والے مضمون کے مصنف بیلجیئم یونیورسٹی کے پروفیسر مائیکل گلن کا کہنا ہے کہ جس ستارے کے گرد یہ سیارے گھوم رہے ہیں وہ ستارہ کافی چھوٹا (اسے بونا ستارہ کہا جاسکتا ہے) اور سرد ہے، جس کی وجہ سے صرف امکان ظاہر کیا جا سکتا ہے کہ ان سیاروں پر پانی ہو اور یہ بھی ممکن ہے کہ زندگی بھی موجود ہو۔

ماہرین فلکیات کے مطابق اگر اس میں اوزون کے آثار ملتے ہیں تو یہ بات ان سیاروں پر زندگی کے آثار کی جانب اشارہ کرتی ہے۔

دوسری جانب یونیورسٹی آف کیمبرج کے سائنسدان اماؤری ٹرائیوڈ نے دریافت سے متعلق کہا کہ ہم نے زمین کے علاوہ دوسرے سیاروں پر زندگی کے آثار کی کھوج لگانے سے متعلق اہم قدم اٹھا لیا ہے۔

ان کے خیال میں اب مزید کسی سیارے کی دریافت ضروری نہیں ہے، کیونکہ اب صحیح ہدف حاصل کرلیا گیا ہے۔

تاہم ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر یہ سیارے دیگر سیاروں کی طرح ناقابل رہائش نکلتے ہیں تو یہ بہت مایوس کن بات ہوگی کہ کائنات میں صرف زمین ہی ایسا سیارہ ہو جو قابل رہائش ہو۔

ماہر فلکیات کے مطابق ان سیاروں کا مشاہدہ ٹیلی اسکوپ کے ذریعے کیا جا سکتا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں