The news is by your side.

Advertisement

دشمن کے عزائم کو سمجھنے کی ضرورت ہے: عبدالباسط

اسلام آباد: پاکستان کے سابق سفیر عبد الباسط کا کہنا ہے کہ بھارت نے مذاکرات کا معاملہ پاکستان کا مؤقف کمزور کرنے کے لیے استعمال کیا، دشمن کے عزائم کو سمجھنے کی ضرورت ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں تعینات پاکستان کے سابق سفیر عبد الباسط نے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دشمن کے عزائم کو سمجھنے کی ضرورت ہے، بھارت کی اسٹریٹجی پاکستان کو غیر مستحکم رکھنا ہے۔

عبد الباسط کا کہنا تھا کہ جموں کشمیر سمیت خطے کے دیگر عوامل کو بھی دیکھنا چاہیئے، ہمیں دیکھنا چاہیئے کون سے عوامل ہمیں غیر مستحکم کر سکتے ہیں، افغانستان کے حالات پر بھی ہماری نظر ہونی چاہیئے۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان میں الیکشن ہو رہے ہیں اس کا بھی اثر پاکستان پر پڑے گا، خطے کے مسائل آپس میں انٹر لنک ہیں۔ بھارت نے مذاکرات کا معاملہ پاکستان کا مؤقف کمزور کرنے کے لیے استعمال کیا۔

اس سے قبل ایک موقع پر عبد الباسط کا کہنا تھا کہ افسوس ہے ماضی کی حکومتیں جموں و کشمیر پر غیر سنجیدہ رہیں، ماضی کی حکومتوں نے مسئلہ کشمیر پر میرٹ پر کام ہی نہیں کیا۔

انہوں نے کہا تھا کہ میرا اندازہ ہے مسئلہ کشمیر پر بھارت کا امریکا سے گٹھ جوڑ ہے، بھارت نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے قبل سے امریکا کو پہلے ہی آگاہ کیا ہوگا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں