The news is by your side.

Advertisement

کورونا وائرس کی تشخیص اب جدید ٹیکنالوجی سے کی جائے گی

ابوظبی : محکمہ صحت کے حکام نے ابوظبی کی عوام کو بہتر سہولیات کی فراہمی کیلئے اہم اقدام کرتے ہوئے فیصلہ کیا ہے کہ کورونا وائرس انفیکشن کی تشخیص اب جدید طریقے اور ٹیکنا لوجی سے کی جائے گی۔

اس حوالے سے ابوظبی کے حکام صحت نے کورونا وائرس انفیکشن کا پتہ لگانے کے لیے مقامی طور پر تیار کردہ ای ڈی ای اسکینرز کے استعمال کی منظوری دے دی ہے۔

سرکاری نیوز ایجنسی کے مطابق یہ اسکیننگ سسٹم ای ڈی ای ریسرچ انسٹی ٹیوٹ ابو ظبی نے تیار کیا ہے جو برقی مقناطیسی لہروں(الیکٹرومیگنیٹک ویوز) کی مدد سے انفیکشن کا پتہ لگا سکتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق جسم میں جب کورونا وائرس کے آراین اے ذرات ہوتے ہیں تو الیکٹرو میگنیٹک ویوز میں تبدیلیاں رونما ہو جاتی ہیں۔ لہٰذا ای ڈی ای اسکینرز ان الیکٹرو میگنیٹک ویوز سے کورونا وائرس کا فوری پتہ لگا سکتے ہیں۔

ابوظبی میں حکام نے یہ فیصلہ شہر میں دیگر مقامات پر کیے جانے والے پائلٹ ٹرائل کے نتائج کو سامنے رکھتے ہوئے کیا ہے۔ ان مقامات میں غنٹوٹ انٹری پوائنٹ، یاس آئی لینڈ پر کچھ مقامات اور مسافاہ کے علاقے میں داخلی اور خارجی راستے شامل ہیں۔ یہ ٹرائل 20 ہزار سے زائد افراد پر کیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق ٹرائل کے نتائج میں دکھایا گیا ہے کہ کورونا وائرس کا پتہ لگانے کے لیے ای ڈی ای سکینرز کا استعمال کافی مؤثر رہا ہے۔ نتائج میں وائرس سے متاثرہ افراد کی شناخت میں 93.5 فیصد اور غیر متاثرہ افراد کی شناخت میں 83 فیصد درستی ظاہر ہوئی ہے۔

اس حوالے سے ابوظبی محکمہ صحت کے سکریٹری جمال محمد الکابی کا کہنا ہے کہ ہمیں ابوظبی میں بنائی گئی ای ڈی ای سکیننگ ٹیکنالوجی کو احتیاطی اقدامات میں شامل کرتے ہوئے خوشی ہورہی ہے۔ ان کے بقول اس سے علاقوں کو محفوظ رکھنے اور عوامی صحت کو برقرار رکھنے میں مدد ملے گی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ای ڈی ای اسکینرز کو پی سی آر اور ڈی پی آئی جیسے دیگر منظور شدہ جانچ کے طریقوں کے ساتھ استعمال کیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں