The news is by your side.

Advertisement

پولیس اہلکاروں کی ٹارگٹ کلنگ ، گرفتار ملزم کے تہلکہ خیز انکشافات

کراچی : سی ٹی ڈی کے ہاتھوں گرفتار ملزم فضل الرحمان عرف فضلو نے انکشاف کیا ہے کہ پولیس افسرکو قتل کرنے کا حکم مذہبی تنظیم کے دفتر سے دیا گیا اور 2اہلکاروں نے معاونت کی۔

تفصیلات کے مطابق سی ٹی ڈی کے ہاتھوں گرفتار ملزم فضل الرحمان عرف فضلو نے اہم انکشافات کرتے ہوئے کہا پولیس افسرکو قتل کرنے کا حکم مذہبی تنظیم کے دفتر سے دیاگیا جبکہ اے ایس آئی علی محسن کے قتل کیلئے مرکزی مقام پر میٹنگ ہوئی۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ فائرنگ تبادلے کے بعد اے ایس آئی نے مذہبی کارکنوں کواٹھانا شروع کیاتھا جبکہ پولیس افسر کو قتل کرنےمیں 2اہلکاروں کی معاونت کا بھی انکشاف ہوا۔

ذرائع نے بتایا کہ دونوں پولیس اہلکار مذہبی تنظیم کے حلف یافتہ کارکن بھی تھے، اے ایس آئی کے گھر سے نکلنے کی اطلاع پولیس کے سپاہی انتظار نے دی۔

سی ٹی ڈی حکام کا کہنا ہے کہ گرفتار ملزم سے تحقیقات کا سلسلہ جاری ہے۔

یاد رہے اے ایس آئی علی محسن کو2012میں فیروزآباد میں شہید کیا گیا تھا اور ملزم کو سی ٹی ڈی انچارج چوہدری صفدر کی ٹیم نے گزشتہ روز گرفتار کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں