The news is by your side.

Advertisement

ایک اور بھارتی اداکار کی خودکشی

ممبئی: بھارت کی شوبز انڈسٹری کے اداکاروں میں خودکشی کا رجحان تیزی سے بڑھنے لگا، ایک اور بھارتی اداکار پھندے پر جھول گیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق ڈرامہ انڈسٹری کے لیے کام کرنے والے چوالیس سالہ بھارتی اداکار سمیر شرما کی پھندا لگی لاش اُن کے گھر سے برآمد ہوئی۔

سمیر شرما نے ’’کیونکہ ساس بھی کبھی بہو تھی‘‘ اور ’’کہانی گھر گھر کی‘‘ جیسے مشہور ڈراموں میں اداکاری کے جوہر دکھائے۔ پولیس حکام کا کہنا ہے کہ مبینہ طور پر اداکار نے خودکشی کی ہے۔

رپورٹ کے مطابق سمیر شرما کی پھندا لگی لاش لاش بدھ کی رات ممبئی میں واقع اُن کے گھر سے برآمد ہوئی۔

پولیس کے مطابق عمارت کے چوکیدار نے لاش دیکھ کر انتظامیہ کو آگاہ کیا اور پھر انہوں نے متعلقہ تھانے کو واقعے سے متعلق بتایا۔

مزید پڑھیں: بھارتی شوبز انڈسٹری میں خودکشی کا بڑھتا رجحان، ایک اور اداکار پھندے پر جھول گیا

پولیس نے لاش کو تحویل میں لے کر ضابطے کی کارروائی کے لیے اسپتال منتقل کیا جبکہ موت کو حادثاتی قرار دیتے ہوئے اس کا مقدمہ بھی درج کرلیا۔ ڈاکٹرز کا کہنا تھا کہ لاش دو روز پرانی ہے یعنی سمیر شرما نے دو روز قبل خودکشی کی۔

واضح رہے کہ  بھارتی فلم انڈسٹری کے لیے یہ سال بہت بھاری ثابت ہوا ہے، گزشتہ دنوں نامور بالی ووڈ اسٹار عرفان خان، رشی کپور کینسر جبکہ میوزک کمپوزر ساجد خان کرونا سے انتقال کرگئے تھے۔

یاد رہے کہ 14 جون 2020 کو بالی ووڈ کے ابھرتے ہوئے نوجوان اداکار سشانت سنگھ نے بھی خودکشی کی، اُن کے دوستوں کا کہنا تھا کہ اداکار کام نہ ملنے کی وجہ سے شدید ڈپریشن کا شکار تھے۔

تین جولائی کو چار دہائیوں تک بالی ووڈ انڈسٹری پر راج کرنے والی معروف کوریئو گرافر سروج خان 70 برس کی عمر میں اچانک انتقال کرگئیں تھیں۔

علاوہ ازیں سلمان خان کے ساتھ ریڈی فلم میں کام کرنے والے مزاحیہ اداکار موہیت بگہیل 27 برس کی عمر میں چل بسے، وہ کینسر کے موذی مرض میں مبتلا تھے، اس سے قبل 13 مئی کو  بالی ووڈ کی مشہور فلم پی کے میں مسٹر پرفیکشنسٹ کے ساتھ کام کرنے والے اداکار کینسر کی وجہ سے انتقال کرگئے تھے۔

یہ بھی پڑھیں: بھارتی اداکارہ کی خودکشی کی کوشش

علاوہ ازیں 39 سالہ اداکار چرن جیوی سرجا کو 7 جون کو دل میں تکلیف ہوئی جس کے بعد انہیں اسپتال لایا گیا، وہ  دوران علاج جانبر نہ ہوسکے تھے۔ چرن جیوی سرجا کی موت کی تصدیق تلنگا فلموں میں کام کرنے والے اداکار اور اہل خانہ نے کی تھی۔

 9 جولائی کو بالی ووڈ فلموں میں مزاحیہ کردار ادا کر کے شہرت کی بلندیوں کو چھونے والے جگدیپ 81 برس کی عمر میں جہانِ فانی سے کوچ کرگئے تھے۔ جگدیپ معروف بالی ووڈ اداکار جاوید جعفری اور نوید جعفری کے والد تھے، اُن کا اصل نام سید اشتیاق احمد جعفری تھا۔

بعد ازاں بھارت کی نوجوان ٹک ٹاک اسٹار نے خودکشی کی جبکہ اُس سے ایک روز قبل مقامی شوبز انڈسٹری کے اداکار سشیل گودا نے خودکشی کر کے اپنی زندگی کا خاتمہ کیا۔

رواں سال جولائی کی 13 تاریخ کو اداکارہ اور ماڈل دیویا چوکسے کمسپرسی کی حالت میں کینسر سے جنگ ہار گئیں تھیں، انہوں نے اپنی موت سے قبل انسٹاگرام پر الوادعی پیغام بھی شیئر کیا جسے پڑھ کر مداح مزید غمزدہ ہوگئے تھے، اسی طرح 24 جولائی کو  بالی ووڈ کی معروف رقاصہ اور کوریئو گرافر امالا شنکر 101 سال کی عمر میں دارِ فانی سے کوچ کر گئیں۔ وہ رات سونے کے لیے اپنے کمرے میں گئیں اور سوتی ہی رہ گئیں۔

یاد رہے کہ تیس جولائی کو مراٹھی فلموں میں کام کرنے والے اداکار بھاکرے کی پھندا لگی لاش برآمد ہوئی تھی جبکہ اس سے دو روز قبل  بھارت کی تامل انڈسٹری سے تعلق رکھنے والی نوجوان اداکارہ وجایا لکشمی نے خودکشی کی کوشش کی تھی، خوش قسمتی سے اُن کی جان بچ گئی تھی۔

وجایا کا شمار انڈسٹری کے متحرک اداکاروں میں ہوتا ہے کیونکہ گزشتہ دو برس میں انہوں نے شوبز کے لیے بہت زیادہ کام کیا۔ خودکشی کی کوشش سے قبل وجایا نے اپنے فیس بک اکاؤنٹ پر ایک ویڈیو شیئر کی تھی جس میں اُن کا کہنا تھا کہ ’کچھ دیر میں میری موت ہوجائے گی‘۔

Comments

یہ بھی پڑھیں