site
stats
عالمی خبریں

افغان آرمی چیف ‘وزیردفاع عہدے سےدستبردار

کابل:افغانستان میں طالبان کے افغان فوجی بیس پرحملےمیں 140فوجیوں کی ہلاکت پرافغان آرمی چیف اور وزیردفاع عہدےسے مستعفی ہوگئے۔

تفصیلات کےمطابق شمالی افغانستان میں افغان فوجی اڈے پر طالبان کے حملے میں 140فوجیوں کی ہلاکت کےواقعے پرافغان آرمی چیف جنرل قدم شاہ شاہم اور وزیردفاع عبداللہ خان حبیبی اپنے عہدے سے دستبردار ہوگئے۔

افغان صدر اشرف غنی نے آرمی چیف اور وزیردفاع کے استعفے قبول کرلیے۔


افغانستان میں فوجی ہیڈکوارٹر پرحملہ‘140فوجی ہلاک


خیال رہےکہ 21اپریل کو افغان صوبہ بلخ میں ہونے والے طالبان کے حملے میں 140فوجی ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے تھے۔

عسکری حکام کاکہناتھاکہ حملے کے بعد کئی گھنٹوں تک جاری رہنے والی لڑائی میں دس طالبان جنگجو بھی مارے گئےتھے۔

یاد رہے کہ اس سے قبل رواں سال مارچ میں بھی کابل کے مرکزی ملٹری اسپتال پر حملہ کیا گیا تھا جو کئی گھنٹے تک جاری رہا تھا۔اس حملےمیں 50افراد ہلاک ہوئے تھے اور حملے کی ذمہ داری داعش نےقبول کی تھی۔


افغان فوج میں گھوسٹ بھرتیوں کا انکشاف


واضح رہےکہ مزار شریف پرواقع فوجی ہیڈکوارٹر پر ہونے والے کے بعد ایک بار پھر فوج میں گھوسٹ فوجیوں کی موجودگی کا انکشاف ہوا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top