The news is by your side.

Advertisement

سکھیکی سے گرفتار افغان باشندوں کو جیل بھیج دیا گیا

سکھیکی: پنجاب کے ضلع حافظ آباد کے علاقے سکھیکی سے گرفتار افغان باشندوں کو جیل بھیج دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سکھیکی میں افغان باشندوں کے مبینہ طور پر سفارش سے شناختی کارڈ بنوانے کے کیس میں عدالت نے گرفتار افغان باشندوں کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق حافظ آباد سے چار افغان باشندے گرفتار کیے گئے تھے، پولیس کا کہنا تھا کہ انھیں سکھیکی کے نادرا آفس سے گرفتار کیا گیا، ملزمان پاکستانی شناختی کارڈ بنوانا چاہتے تھے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ چاروں ملزمان سے افغان پاسپورٹ، غیر ملکی کرنسی اور دستاویزات بھی برآمد ہوئی تھیں۔

طورخم بارڈر سے مبینہ افغان ایجنٹ گرفتار، پاکستانی اورافغانی پاسپورٹ برآمد

یاد رہے کہ گزشتہ برس غیر ملکیوں کو قومی شناختی کارڈ جاری کرنے پر نادرا سے 120 ملازمین برطرف کیے گئے تھے جب کہ جعل سازی پر 9554 قومی شناختی کارڈز منسوخ کیے گئے تھے جب کہ ایک لاکھ اکیس ہزار 117 کارڈز مشکوک ہونے پر بلاک کیے گئے۔ گزشتہ دور حکومت میں بھی وزیر داخلہ کے حکم پر دو لاکھ شناختی کارڈ بلاک کیے گئے تھے۔

گزشتہ برس ستمبر میں طورخم بارڈر سے افغان ایجنٹ پکڑا گیا تھا جس کے قبضے سے پاکستانی اور افغانی پاسپورٹ برآمد ہوئے تھے، ایجنٹ پانچ مرتبہ بھارت جا چکا تھا، پشتون لبریشن آرمی کے نام سے تنظیم بھی بنا رکھی تھی۔ 2018 میں افغان کرکٹر راشد خان کی جعل سازی بھی سامنے آئی تھی، نادرا کا کہنا تھا کہ راشد خان نے افغانی شہریت چھپا کر جعلی دستاویزات پر پاکستانی شناختی کارڈ حاصل کیا تھا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں