The news is by your side.

Advertisement

مسلمان ماڈل کا اٹلی کے بڑے مقابلہ حسن میں شرکت کا اعلان

اٹلی سے تعلق رکھنے والی ایک مسلمان ماڈل نے ملک کے بڑے مقابلہ حسن میں شرکت کیلئے منعقد ہونے والے مقابلوں میں شاندار کامیابی حاصل کرکے نیا تنازعہ کھڑا کردیا ہے۔

شمال مشرقی اٹلی سے تعلق رکھنے والی 20 سالہ اہلم البرنیس نے مقابلہ حسن ’مس اٹیلیا‘ میں شرکت کا اعلان کیا تو جہاں بڑے پیمانے پر ان کے حمایتی سامنے آگئے وہیں ان پر تنقید کرنے والے بھی میدان میں آگئے۔

 وہ اب کوالیفائنگ راؤنڈ کے آخری مرحلے میں پہنچ گئی ہیں اور قوی امید ظاہر کی جارہی ہے کہ وہ کامیاب ہوجائیں گی۔ اس موقع پر ماڈل کا مذہب بڑے پیمانے پر موضوع بحث بن گیا ہے۔

ان پر تنقید کرنے والوں کا کہنا ہے کہ ان کا مذہب اسلام کے ساتھ تعلق اس بات کی اجازت نہیں دیتا کہ وہ ’مس اٹیلیا‘ جیسے شرمناک مقابلوں میں شرکت کریں۔

اپنے فیس بک پیج پر ایک پیغام میں اس کا کہنا ہے کہ میں اسلام اور دیگر مذاہب کا مکمل احترام کرتی ہوں اور میں فن کی خاطر دوسری تمام شر کاء کی طرح مس اٹلی کے مقابلے میں حصہ لےرہی ہوں اور ٹائیٹل جیتنا چاہتی ہوں مس اہلام البرینس ماڈل اور پی آر ہوسٹس کے طورپر کام کرتی ہے۔


اس کا کہنا ہے کہ میری مغربی طرز زندگی والی فیملی نے میری چوائسز کی بھرپور حمایت کی ہے اور وہ مس اٹلی کےآخری کوالیفائنگ رائونڈ میں کامیابی کے لئے پرامید ہے جو اگلے ماہ شروع ہوگا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں