فضائی آلودگی، گردوں کے مرض کا باعث، لاکھوں افراد متاثر air pollution
The news is by your side.

Advertisement

فضائی آلودگی، گردوں کے مرض کا باعث، لاکھوں افراد متاثر

ممبئی: فضائی آلودگی کے باعث گردوں کے امراض میں نمایاں اضافہ ہورہا ہے، یہ بات بھارت میں ہونےو الی ایک تحقیق میں سامنے آئی۔

بھارتی جریدے اے ایس این کڈنی میں شائع ہونے والی تحقیقاتی رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں ہونے والی فضائی آلودگی کے باعث لوگ گردوں کی بیماری میں مبتلا ہورہے ہیں۔

تحقیق میں گردوں کی بیماریاں تیزی سے پھیلنے کی وجوہات پر جب غور کیا گیا تو یہ بات سامنے آئی کہ فضائی آلودگی اور پھیلنے والا دھواں لوگوں کے جسموں میں داخل ہوکر اُن کی صحت کو بری طرح متاثر کررہا ہے۔

تصویر بشکریہ گوگل

تحقیق میں یہ بات بھی سامنے آئی کہ گزشتہ چند سالوں کے دوران آلودگی کے باعث بڑی تعداد میں لوگ جاں بحق جبکہ ہزاروں بری طرح سے متاثر ہوئے، جن میں سے بیشتر کا تعلق ایشیا سے ہے۔

بھارتی جریدے میں شائع ہونے والی رپورٹ میں ماہرین نے بڑھتی ہوئی فضائی آلودگی پر اپنے شدید تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے فوری طور پر  اس کے روک تھام کےلیے عملی اقدامات کرنے کا مشورہ دیا ہے۔ رپورٹ کے مطابق ہرسال فضائی آلودگی سے متاثر ہونے والے افراد کی تعداد 1 کروڑ سے تجاوز کرچکی ہے۔

تحقیق میں دنیا بھر کے ماہرین نے حصہ لیا۔

احتیاطی تدابیر

ماہرین نے عوام کو احتیاطی تدابیر سے آگاہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ جب بھی گھر سے باہر ماسک لگا کر نکلیں اور کسی بھی چھوٹی سے چھوٹی بیماری کے نتیجے میں فوری طور پر اپنے طبیب سے مشورہ کریں۔

تصویر بشکریہ گوگل

واضح رہے کہ بھارتی حکومت نے بڑھتی ہوئی فضائی آلودگی کو مدنظر رکھتے ہوئے رواں برس دیوالی کے موقع پر آتشبازی کرنے پر پابندی عائد کرتے ہوئے باقاعدہ عوامی رابطہ مہم کا آغاز کیا تھا۔

دوسری جانب موسم سرما کا آغاز ہوتے ہی اسموگ نے بھارت اور پاکستان کے مختلف شہروں کو اپنی لپیٹ میں لیا ہوا ہے جس کے باعث نظامِ زندگی بری طرح سے متاثر ہورہا ہے، بھارت کے متاثرہ علاقوں میں بچوں کے اسکول بند کرنے جبکہ لاہور میں تعلیمی اداروں کے اوقات تبدیل کرنے کی تجاویز بھی سامنے آئی ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں