The news is by your side.

Advertisement

شامی فوج کی حلب میں بمباری،34افرادجاں بحق

حلب: باغیوں کے زیرقبضہ حلب شہر میں روسی اورشامی جنگی طیاروں نے اسپتال پر بمباری کی جس کے نتیجےمیں 34افراد جان کی بازی ہار گئے۔

تفصیلات کےمطابق ہفتے کے روز باغیوں کے زیر قبضہ حلب شہر کے سب سے بڑے ہسپتال ایم ٹین پرروسی اور شامی جنگی طیاروں نے شدید بمباری کی جس میں 34 افراد جاں بحق ہوئے۔

سیریئن آبزرویٹری فار ہیومن رائٹس کا کہنا ہےکہ ایم ٹین ہی کے قریبی علاقے میں ایک فیلڈ اسپتال پر بھی فضائی حملہ کیا گیا ہے، جس میں ایک شخص جاں بحق ہو گیا، جبکہ اس ہسپتال نے بھی کام کرنا بند کر دیا۔

خیال رہےکہ بدھ کے روز بھی ایک اسپتال پر بمباری کی گئی تھی۔اقوام متحدہ نے بدھ کے روز ہونے والے حملوں کو ’جنگی جرم‘ قرار دے کر ان کی مذمت کی تھی۔

مزید پڑھیں: دمشق: حلب میں حکومتی افواج کی اسپتال پر بمباری، 50 افراد جاں بحق

اپوزیشن رہنماؤں نے حلب کے اسپتالوں پر فضائی حملوں کا الزام روس اور اسد حکومت پر عائد کیا ہے۔ان کے مطابق جنگی طیاروں سے حملوں اور بمباری نے زخمیوں کی مرہم پٹی کے مراکز کو برباد کر دیا ہے۔

طبی امدادی تنظیم ڈاکٹرز ود آؤٹ بارڈرز اور سیرین آبزرویٹری برائے انسانی حقوق نے ان حملوں کو فوری طور پر بند کرنے کی اپیل کی ہے۔

مزید پڑھیں: حلب میں فضائی بمباری سے 81 افراد جاں بحق 250زخمی

ڈاکٹرز ود آؤٹ بارڈرز کے مطابق اکیس ستمبر سے چھبیس ستمبر کے درمیان مشرقی حلب کے تمام اسپتال معمول کے فرائض انجام دے رہے تھے لیکن اب تمام طبی مراکز کے ورکرز اپنے کام چھوڑ کر زندگی بچانے کی فکر میں ہیں۔

واضح رہے کہ شامی اور روسی جنگی طیاروں کی اسپتال پر بمباری کی اقوام متحدہ، جرمنی، امریکا، فرانس اور سویڈن کی جانب سے مذمت کی گئی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں