The news is by your side.

Advertisement

حکومت بلوچستان اور چینی کمپنی میں گوادر کے لیے پینے کے پانی کا معاہدہ

کوئٹہ: وزیراعلیٰ بلوچستان عبدالقدوس بزنجو نے چینی اوورسیز ہولڈنگ کمپنی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر سے ملاقات کی جس میں حکومت بلوچستان اورچینی کمپنی کے درمیان گوادر کے لیے پینے کے پانی کا معاہدہ کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق چینی کمپنی معاہدے کے تحت گوادر کو یومیہ تین لاکھ گیلن پینے کا صاف پانی فراہم کرے گی۔ حکومت بلوچستان چینی کمپنی کو 80 پیسا فی گیلن پانی ادا کرے گی۔

وزیراعلیٰ بلوچستان عبدالقدوس بزنجو نے کہا ہے کہ معاہدے سے گوادر میں پانی کا مسئلہ کسی حد تک حل ہوجائے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ گوادر پاکستان کا مستقبل ہے، گوادرکے شہریوں کوسہولتیں فراہم کرنا ہماری ذمہ داری ہے۔

انھوں نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ بلوچستان کی مضبوطی ہی پاکستان کی مضبوطی ہے، ہماری پارٹی کا مقصد صوبے کے عوام کو ایک پلیٹ فارم دینا ہے، ہم بلوچستان کے حقوق سے پیچھے نہیں ہٹیں گے۔

وزیراعلیٰ بلوچستان کا کوئٹہ کے متعدد علاقوں کا دورہ، مختلف امور کا جائزہ

ان کا کہنا تھا کہ وفاقی بجٹ میں بلوچستان کا حصہ ایک ہزار ارب سے زیادہ بنتا ہے جب کہ اسے بجٹ کا صرف تین سو ارب ملتا ہے، وفاقی ادارے بلوچستان کے بجٹ کو استعمال نہیں کرتے۔

وزیر اعلیٰ بلوچستان نے کہا کہ ہرسال پرانی اسکیموں کونئے نام سے لے آیا جاتا ہے، ن لیگ نے گزشتہ پانچ سال نہایت منفی پالیسی رکھی۔ نا انصافی ن لیگ کرتی ہے جب کہ گالیاں پنجاب کےعوام کو پڑتی ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں