بدھ, مئی 22, 2024
اشتہار

5 نسلوں کا پیار پانے والی دنیا کی خوش نصیب معمر ترین خاتون کا انتقال

اشتہار

حیرت انگیز

زندگی میں اپنی 5 نسلیں دیکھنے والی اور کئی تاریخی واقعات کی گواہ دنیا کی معمر ترین خاتون 121 برس کی عمر میں انتقال کر گئیں۔

انڈین میڈیا کے مطابق دنیا کی معمر ترین خاتون کنجیروما کا 121 سال کی عمر میں بھارت میں کیرالہ سے متصل علاقے ویلانچیری کے نزدیک پوکاتیری میں واقع اپنی رہائش گاہ پر انتقال ہو گیا۔

کنجیروما نے اسپین کی ماریہ برانیاس (116 سال) کے ریکارڈ کو پیچھے چھوڑتے ہوئے دنیا کی معمر ترین خاتون کے طور پر اپنا نام گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں درج کرایا تھا۔

- Advertisement -

خاتون 2 جون 1903 کو بھارت میں پیدا ہوئی تھیں اور 17 برس کی عمر میں انہوں نے سید علی سے شادی کی تھی۔ انہوں نے 13 بچوں کو جنم دیا، جن میں سے 6 اب بھی بقید حیات ہیں۔ کنجیروما نے صرف مدرسے سے ہی تعلیم حاصل کی تھی۔

کنجیروما وہ خوش نصیب خاتون نہیں جنہیں اپنی اولاد کی پانچ نسلوں کا پیار ملا۔ وہ اپنی زندگی میں 1921 کی مالابار بغاوت، تحریک خلاف، تحریک پاکستان جیسے کئی تاریخی واقعات کی گواہ بنیں۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق دنیا کو معمر ترین خاتون کو زندگی میں کبھی بھی ذیابیطس، بلڈپریشر یا کولیسٹرول جیسی بیماریوں کا سامنا نہیں کرنا پڑا۔ وہ 115 برس تک اپنے پیروں پر چلتی پھرتی تھیں تاہم بڑھاپے کے باعث وہ گزشتہ سات سال سے گھر میں گھومنے پھرنے کے لیے وہیل چیئر کا استعمال کیا کرتی تھیں۔

کنجیروما خاتون کی خوراک انتہائی سادہ تھی۔ وہ عام طور پر کانجی (چاول کا دلیہ) اور کبھی کبھار تھوڑی مقدار میں بریانی کھاتی تھیں۔

Comments

اہم ترین

ویب ڈیسک
ویب ڈیسک
اے آر وائی نیوز کی ڈیجیٹل ڈیسک کی جانب سے شائع کی گئی خبریں

مزید خبریں